ایرانی فوج نےخلیج عُمان میں کشتی سے ٹکرانے کے بعدبحری جہازکو قبضے میں لے لیا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

ایرانی فوج نے جمعرات کے روزکہا ہے کہ اس کی بحریہ نے خلیج عُمان میں مارشل جزائر کے جھنڈے والے ایک جہاز کوقبضے میں لے لیا ہے۔یہ جہازایک ایرانی کشتی سے ٹکرا گیا تھا اورپھرموقع سے فرار ہونے کی کوشش کررہا تھا۔

سرکاری میڈیا کے مطابق فوج نے ایک بیان میں کہا ہے کہ یہ واقعہ بدھ کی رات خلیج میں پیش آیا جس کے نتیجے میں عملہ کے متعدد ایرانی ارکان لاپتا اور زخمی ہوگئے۔

بیان میں کہاگیا ہے کہ ایرانی بحری افواج نے بعد میں خلیج عُمان میں فرارہونے والے جہازکوروک لیا اور اس کارُخ ایران کے ساحلی پانیوں کی طرف موڑدیا۔

امریکی بحریہ نے اس واقعہ کے بارے میں ایک مختلف مؤقف پیش کیا ہے۔اس نے جمعرات کو ایک بیان میں کہا ہے کہ ایرانی فورسز نے خلیج عمان میں بین الاقوامی پانیوں سے گذرتے ہوئے مارشل جزائرکے جھنڈے والے آئل ٹینکرایڈوانٹیج سویٹ کو قبضے میں لے لیا۔

امریکی بحریہ نےایران کی جانب سے بحری جہازوں کومسلسل ہراساں کرنے اورعلاقائی پانیوں میں جہاز رانی کے حقوق میں مداخلت پرتنقید کی اوراس آئل ٹینکر کی فوری رہائی کا مطالبہ کیا ہے۔

بیان میں کہاگیاہے کہ گذشتہ دوبرسوں کے دوران میں ایران نے مشرق اوسط میں سفرکرنے والے پانچ تجارتی بحری جہازوں کوغیرقانونی طورپرتحویل میں لیا ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں