بن لادن آپریشن والے دن وائٹ ہاؤس کے اندر کی نئی تصاویر سامنے آ گئیں

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

پہلے کبھی نہ دیکھی گئی تصاویر نے یکم مئی 2011 کے واقعات تازہ کر دئیے۔ تصاویر نے القاعدہ سربراہ کو مارنے کے آپریشن کے دوران وائٹ ہاؤس کے ماحول کو عکس بند کیا۔

سی این این کے مطابق وائٹ ہاؤس کے سیچویشن روم میں اس وقت کے امریکی صدر براک اوباما اور ان کے نائب صدر جو بائیڈن کے چہروں پر تناؤ واضح تھا۔ اس وقت کے وزیر دفاع باب گیٹس بھی موجود تھے۔ تصاویر میں اس وقت کی وزیر خارجہ ہلیری کلنٹن اور اوباما کے اعلیٰ معاونین کو اصل وقت میں بن لادن کے خلاف کارروائی کو دیکھتے ہوئے بھی دکھایا گیا تھا۔

تصویروں میں اوباما کو غور سے دیکھتے اور سوال پوچھتے ہوئے بھی دکھایا گیا۔ جب یہ بات سامنے آئی کہ کارروائی کامیاب ہو گئی تو گیٹس کا ہاتھ ہلاتے ہوئے اس کی تصویر کھینچی گئی۔ پھر وہ سابق صدور جارج ڈبلیو بش اور بل کلنٹن اور دیگر عالمی رہنماؤں کو بتانے کے لیے کال کرتے ہیں۔

اس دوران اوباما اور ان کی ٹیم کی تقریر پر کام کرنے والی تصاویر بھی دکھائی گئیں۔ یہ تقریر انہوں نے رات دیر گئے پیش کرنی تھی۔ خیال رہے یہ تصاویر "واشنگٹن پوسٹ" اخبار نے "فریڈم آف انفارمیشن ایکٹ" کے تحت ایک درخواست کے بعد اوباما کی صدارتی لائبریری سے حاصل کی ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں