امریکاکے نامزد بھارتی نژاداجے بنگا عالمی بینک کے چودھویں صدرمنتخب

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
4 منٹس read

عالمی بینک کے ایگزیکٹوڈائریکٹرز نے امریکا کے نامزد اجے بنگا کوپانچ سال کی مدت کے لیے اپنا نیا صدر منتخب کرلیا ہے۔

بورڈ کی جانب سے ان کے انتخاب کی منظوری کے حق میں ووٹنگ کے فوراً بعد ایک بیان میں بینک نے کہا ہےکہ بورڈ ورلڈ بینک گروپ ارتقاء کے عمل پر مسٹر بنگا کے ساتھ مل کرکام کرنے کا منتظر ہے۔ وہ دوجون کو ڈیوڈ ملپاس کی جگہ ادارے کے چودھویں صدر کی حیثیت سے عہدہ سنبھالیں گے۔

اجے بنگانےحال ہی میں جنرل اٹلانٹک میں وائس چیئرمین کی حیثیت سے خدمات انجام دی ہیں۔اس سے پہلے، وہ قریباً 24،000 ملازمین کی حامل عالمی تنظیم ماسٹر کارڈ کے صدر اورچیف ایگزیکٹو آفیسر(سی ای او)تھے۔ان کی قیادت میں ، ماسٹر کارڈ نے مرکز برائے شمولیتی ترقی کا آغاز کیا ، جو دنیا بھر میں مساوی اور پائیدارمعاشی ترقی اور مالی شمولیت کو آگے بڑھاتا ہے۔وہ انٹرنیشنل چیمبر آف کامرس کے اعزازی چیئرمین تھے اورانھوں نے 2020 سے 2022 تک چیئرمین کی حیثیت سے خدمات انجام دی تھیں۔وہ 2021 میں جنرل اٹلانٹک کے موسمیاتی مرتکزفنڈ ، بیونڈ نیٹ زیرو کے مشیر بن گئے تھے۔

اجے بنگا نے شراکت داری برائے وسطی امریکا کے شریک چیئرمین کی حیثیت سے بھی خدمات انجام دی ہیں۔یہ نجی تنظیموں کا ایک اتحاد ہے اور یہ ایل سلواڈور ، گوئٹے مالا اور ہونڈراس میں پسماندہ آبادیوں میں معاشی مواقع کو فروغ دینے کے لیے کام کرتا ہے۔ وہ اس سے قبل امریکن ریڈ کراس، کرافٹ فوڈز اور ڈاؤ انکارپوریٹڈ کے بورڈز میں شامل تھے۔

وہ سائبرریڈینیس انسٹی ٹیوٹ کے شریک بانی ہیں اور نیویارک کے اکنامک کلب کے وائس چیئرمین رہ چکے ہیں۔انھیں 2012 میں فارن پالیسی ایسوسی ایشن میڈل، 2016 میں صدر جمہوریہ ہند کی جانب سے پدم شری ایوارڈ، 2019 میں ایلس آئی لینڈ میڈل آف آنر اور بزنس کونسل فارانٹرنیشنل انڈرسٹینڈنگ کے گلوبل لیڈرشپ ایوارڈ اور 2021 میں سنگاپور پبلک سروس اسٹار سے نوازا گیا تھا۔

عالمی بینک کے ایگزیکٹو ڈائریکٹرز نے سنہ 2011ء میں حصص داران کے ذریعےانتخاب کے عمل کی پیروی کی ہے۔اس عمل میں ایک کھلی، میرٹ پر مبنی اور شفاف نامزدگی شامل تھی۔بینک کی رکنیت کے کسی بھی شہری کوکوئی بھی ایگزیکٹو ڈائریکٹر یا گورنرکے ذریعے صدر نامزدکرسکتا ہے۔انھیں امریکی صدر جوبائیڈن نے عالمی بینک کا صدرنامزد کیا تھا۔اس کے بعد ایگزیکٹو ڈائریکٹرز نے مسٹر بنگا کے کوائف کا تفصیلی جائزہ لیا اوران کا ایک جامع انٹرویوکیا گیا۔

بورڈ اپریل 2023 کے موسم بہارکے اجلاسوں میں زیر بحث ورلڈ بینک گروپ کے ارتقاء کے عمل اور ترقی پذیرممالک کو درپیش مشکل ترین ترقیاتی چیلنجوں سے نمٹنے کے لیے ورلڈ بینک گروپ کے تمام عزائم اور کوششوں پر مسٹر بنگا کے ساتھ مل کر کام کرنے کا منتظر ہے۔عالمی بینک گروپ کے صدر بین الاقوامی بینک برائے تعمیرِنو اور ترقی (آئی بی آر ڈی) کے ایگزیکٹوڈائریکٹرز کے بورڈ کے چیئرمین بھی ہوتے ہیں۔

واضح رہے کہ امریکاکے امیدوار نے روایتی طور پرہمیشہ عالمی بینک میں اعلیٰ عہدہ حاصل کیا ہے۔امریکا عالمی بینک کاسب سے بڑا شیئر ہولڈر ہے۔موجودہ صدر ڈیوڈ مالپاس کوسابق صدرڈونلڈ ٹرمپ نے نامزد کیا تھا،انھوں نے گذشتہ ہفتے غیرمتوقع طورپراعلان کیا تھا کہ وہ جون کے آخر تک ملک چھوڑنے کا ارادہ رکھتے ہیں۔

اجے بنگاکاانتخاب ایسے وقت میں ہواہے جب عالمی بینک اوراس کے جڑواں ادارے بین الاقوامی مالیاتی فنڈ (آئی ایم ایف) سے امداد کے طالب دنیا کے ممالک کی تعدادبڑھتی جارہی ہے، کم آمدنی والے 60 فی صد ممالک مالیاتی بحران کا شکارہیں یا اس کے قریب ہیں۔اس دوران میں امریکی وزیرخزانہ جینٹ یلین ترقیاتی قرض دہندگان کو ملک کے مخصوص قرضوں پر اپنی روایتی توجہ سے ہٹا کر موسمیاتی تبدیلی اور وبائی امراض سے نمٹنے جیسے عالمی مسائل پر توجہ مرکوز کرنے پر زوردے رہی ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں