سعودی عرب خطے کے اہم ترین شراکت داروں میں سے ایک ہے: امریکہ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
3 منٹس read

امریکی محکمہ خارجہ نے پیر کے روز کہا ہے کہ سعودی عرب خطے میں ہمارے سب سے اہم شراکت داروں میں سے ایک ہے۔ خطے میں واشنگٹن اور ریاض کے مشترکہ سلامتی اور اقتصادی مفادات موجود ہیں۔ ایک مشترکہ بیان میں ریاستہائے متحدہ امریکہ اور سعودی عرب نے جدہ میں ہفتے کے روز سوڈانی فوج اور ریپڈ سپورٹ فورسز کے نمائندوں کے درمیان لڑائی کو روکنے کے لیے ابتدائی مذاکرات کے آغاز کا خیرمقدم کیا۔ خیال رہے سوڈان میں فوج اور آر ایس ایف کے درمیان 15 اپریل سے لڑائی چل رہی ہے۔

واشنگٹن اور ریاض نے 6 مئی کو سعودی وزارت خارجہ کی طرف سے شائع ایک بیان میں دونوں فریقوں پر زور دیا کہ وہ چند اہداف کے حصول کے لیے بات چیت میں سنجیدگی سے حصہ لیں۔ ان اہداف میں ایک مؤثر قلیل مدتی جنگ بندی کا حصول، ہنگامی انسانی امداد کی سہولت کے لیے کام کرنا، بنیادی خدمات کی بحالی اور مذاکرات کے لیے ٹائم ٹیبل ترتیب دینا شامل ہو۔

سعودی وزارت خارجہ نے مزید کہا کہ مذاکرات کے دونوں فریقوں نے سوڈان میں شہریوں کے تحفظ اور انسانی ہمدردی کے کاموں میں سہولت فراہم کرنے کے عزم کے اعلان کا جائزہ لینا شروع کر دیا ہے۔

سعودی وزارت خارجہ نے عندیہ دیا کہ دونوں فریقوں کے درمیان مذاکرات آنے والے دنوں میں جاری رہیں گے۔ ایک موثر اور عارضی جنگ بندی تک پہنچنے کی امید ہے تاکہ ضرورت مندوں تک انسانی امداد پہنچائی جا سکے۔ توقع ہے کہ جدہ میں ’’سعودی امریکی اقدام‘‘ پر ہونے والی یہ بات چیت اگلے دنوں میں ایک مؤثر جنگ بندی تک پہنچ سکے گی۔

دوسری طرف بین الاقوامی سہ فریقی میکانزم جس میں اقوام متحدہ، افریقی یونین اور بین الحکومتی اتھارٹی برائے ترقی شامل ہیں، نے ایک بیان میں اس سیاسی پیش رفت کا خیرمقدم کیا ہے۔ سہ فریقی گروپ نے امید کا اظہار کیا ہے کہ جدہ میں دونوں فریقوں کے نمائندوں کے درمیان تکنیکی بات چیت کے نتیجے میں ایسی مفاہمت پیدا ہو جائے گی جو آگے چل کر ایک جامع جنگ بندی کا باعث بنے گی۔

یاد رہے 15 اپریل سے شروع لڑائی کے 22 دنوں میں 700 افراد ہلاک اور 5000 سے زیادہ زخمی ہوچکے ہیں۔ اعداد و شمار کے مطابق سوڈان میں اس مسلح تصادم میں 3 لاکھ 35 ہزار افراد بے گھر ہوگئے ہیں۔ اقوام متحدہ نے انتباہ کیا کہ آنے والے مہینوں میں سوڈان میں 19 ملین افراد بھوک اور غذائی قلت کا شکار ہو سکتے ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں