متحدہ عرب امارات کا زایدالمیعاد سوڈانی پاسپورٹ رکھنے والوں کے جرمانے معاف کرنےکافیصلہ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size

متحدہ عرب امارات نے زاید المیعاد سوڈانی پاسپورٹ رکھنے یا زایدالمیعاد قیام کرنے والوں کے جرمانے معاف کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔

یواے ای کی وفاقی اتھارٹی برائے شناخت، شہریت، کسٹمزاور پورٹ سکیورٹی (آئی سی پی) نے یہ اعلان خرطوم میں جاری لڑائی کے تناظر میں کیا ہے۔ سوڈان میں متحارب فورسز کے درمیان لڑائی کے نتیجے میں شہری انسانی بحران کا شکار ہوچکے ہیں اور دس لاکھ سے زیادہ افراد بے گھر ہوئے ہیں۔

اماراتی اتھارٹی کے ایک بیان کے مطابق 15اپریل 2023 کے بعد یواے ای میں قیام پذیر جرمانے سے استثنا میں وہ سوڈانی شہری بھی شامل ہیں جن کے ویزے اور رہائشی اجازت نامے یا متحدہ عرب امارات سے روانگی کی ڈیڈ لائن گزرچکی ہے۔سوڈانی سفارت خانے نے متحدہ عرب امارات کی قیادت کا اس حمایت پرشکریہ ادا کیا ہے۔

قبل ازیں جمعہ کو متحدہ عرب امارات سے ایک امدادی جہاز ایک ہزار ٹن سامان اور خوراک لے کر پورٹ سوڈان پہنچا۔ یواے ای نے اب تک 14 پروازوں کے ذریعے 540 ٹن سے زیادہ خوراک اور طبی سامان سوڈان میں بھیجا ہے اور جنگ زدہ ملک سے قریباً ایک ہزار افراد کو نکالنے کے لیے نو طیارے بھیجے تھے۔

ہمسایہ ملک سعودی عرب نے مئی کے اوائل میں ایسے سوڈانی عازمین کے لیے عمرہ ویزوں کی میعاد میں توسیع کا اعلان کیا تھا جو مملکت میں موجود ہیں اور وطن واپس نہیں جاسکتے۔

سعودی عرب نے وزارت داخلہ کے ای پورٹل پر "میزبان سوڈانی عمرہ پرفارمرز" سروس کا بھی آغاز کیا ہے تاکہ مملکت میں شہریوں اور رہائشیوں کو عمرہ ویزے پر سوڈانیوں کی میزبانی کرنے کی اجازت دی جاسکے۔

اس آن لائن سروس کے ذریعے مملکت میں عمرہ ویزے پر موجود سوڈانیوں کے رشتہ داروں یا دوستوں کے ساتھ ساتھ سعودی شہریوں کو بھی عمرہ ویزا کو بغیر کسی قیمت کے وزیٹر ویزا میں تبدیل کرنے کی اجازت دی گئی ہے۔

عالمی ادارہ صحت کے مطابق سوڈان میں جاری لڑائی میں اب تک 705 افراد ہلاک اور 5287 زخمی ہو چکے ہیں۔گذشتہ ہفتے جدہ میں سوڈان کی فوج اور نیم فوجی سریع الحرکت فورسز کے درمیان امریکا اور سعودی عرب کی ثالثی میں مذاکرات میں سوڈانی شہریوں کے تحفظ کے سمجھوتے پر دست خط کے بعد معمولی پیش رفت ہوئی تھی۔

سوڈان میں متحارب فورسز میں جاری لڑائی چھٹے ہفتے میں داخل ہو چکی ہےاور دونوں فریقوں نے ایک دوسرے پر جنگ بندی کے متعدد معاہدوں کی خلاف ورزی کا الزام عاید کیا ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں