شادی کا دعوت نامہ جسے دیکھ کے ہر آنکھ اشکبار ہو گئی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

دل کو چیر دینے والے الفاظ پر مشتمل ایک پیغام اور اس سے منسلک ایک شادی کا دعوت نامہ، جسے ایک سعودی والد نے سوشل میڈیا پر پوسٹ کیا مگر اسے دیکھ کر سب آنکھیں اشکبار ہو گئیں اور گذشتہ چند گھنٹوں کے دوران سوشل میڈیا پر سینکڑوں لوگوں نے افسوس اور دکھ کا اظہار کیا۔

یہ دعوت نامہ ان کی بیٹی کی شادی کا تھا جو شادی سے ایک روز قبل وفات پا گئی۔

غمزدہ باپ جو کہ ایک مصنف ہیں نے ٹوئٹر پر اپنی بیٹی کی شادی کے دعوت نامے کی تصویر پوسٹ کی اور لکھا کہ

"میری بیٹی رغد سلمان حسن الفیفی کے لیےدعا کیجیے، اس کی شادی 8 ذی القعدہ بروز اتوار تھی، لیکن وہ ہفتہ کے روز اپنے کفن میں رحمٰن کے بارگاہ میں سپرد خاک کر دی گئی۔

اے اللہ اس کی جوانی کے بدلے جنت دے دے، اس کی مغفرت فرما اور اس پر رحم فرما، اور اس کی قبر کو جنت کے باغوں میں سے ایک باغ بنا، اور اسے سوال کے وقت ثابت قدم رکھ۔"

یہ دلخراش سانحہ اور دردناک پیغام سوشل میڈیا پر وائرل ہو گیا۔ بہت سے سعودیوں نے سوگوار والد اور غم زدہ خاندان سے تعزیت کا اظہار کیا اور مرحومہ کے لیے دعا کی۔

20 سالہ رغد سلمان کی موت ان کی شادی سے ایک روز قبل واقع ہوئی تھی، جو گذشتہ اتوار کو ان کے چچا زاد امین بن سلیمان الفیفی سے ہونے والی تھی۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں