امریکی بحریہ کا چینی احتجاج کو خاطر میں لائے بغیر آبنائے تائیوان سے گزرنے کا اعلان

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

امریکی بحریہ نے آبنائے تائیوان کو عبور کرنے کا اعلان کیا ہے۔ اس فیصلے پر بیجنگ نے واشنگٹن سے شدید احتجاج کیا ہے۔ امریکی اعلان ایسے موقع پر سامنے آیا ہے جب سنگاپور میں علاقائی ممالک کی دفاع کے حوالے سے ملاقات کی تیاریاں جاری ہیں۔

ایک امریکی عہدیدار نے شناخت ظاہر نہ کرنے کی شرط پر "بلومبرگ" کو بتایا کہ بحری بیڑا، چین اور تائیوان کے درمیان موجود متنازع آبنائے تائیوان سے گزرے گا۔

امریکی بحریہ نے اس سے قبل اپریل میں بھی آبنائے تائیوان کو عبور کیا تھا، جس پر چین نے شدید احتجاج کیا۔

امریکا کی جانب سے یہ اقدام ایسے موقع پر اٹھایا جا رہا ہے کہ جب سنگاپور میں امریکی اور چینی فوج کے اعلیٰ عہدیدار "شنگری لا" ڈائیلاگ میں شرکت کے لئے جمع ہو رہے ہیں۔

امریکا نے حال ہی میں امریکی وزیر دفاع لائیڈ آسٹن کو چینی ہم منصب سے براہ راست ملاقات کا گرین سنگل نہ ملنے پر بھی بیجنگ کو تنقید کا نشانہ بنایا تھا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں