گندم غائب، امریکی کمپنیوں اور کیف کے درمیان 130 ملین ڈالر پر عدالتی جنگ جاری

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
3 منٹس read

اناج کے غائب ہوجانے جیسے معاملے نے امریکی سرمایہ کاروں کو یوکرین کی ایک کمپنی کے خلاف مقدمہ دائر کرنے پر آمادہ کردیا ۔ یہ صورتحال اس وقت پیدا ہوئی ہے جب کیف کی جانب سے کرپشن کے خلاف لڑنے کے بھرپور عزم کا اظہار بھی کیا جارہا ہے۔

امریکی کمپنیوں نے کہا کہ کیف حکومت کے کچھ عناصر کی وجہ سے 130 ملین ڈالر کے اثاثوں کی وصولی کی ان کی کوششوں میں رکاوٹ پیدا ہوگئی ہے۔ یہ کمپنیاں یوکرین کو سب سے بڑی نجی غیر ملکی قرض دہندگان میں سے کچھ کی نمائندگی بھی کرتی ہیں۔

وال سٹریٹ جرنل کی ایک رپورٹ کے مطابق تنازع میں شامل یوکرین کی کمپنی نے دعویٰ کیا ہے کہ امریکی کمپنیوں نے یوکرین میں جاری جنگ کو غلہ کی تجارت اور اس کے ذیلی اداروں کا انتظام سنبھالنے کے بہانے کے طور پر استعمال کیا ہے۔

یہ تنازع اب بھی یوکرین، برطانیہ اور سوئٹزرلینڈ کی عدالتوں میں جگہ بنا رہا ہے۔ ساتھ ساتھ یہ مغربی تعاون پر انحصار کرنے والی کیف حکومت کو درپیش چیلنجز کی بھی عکاسی کر رہا ہے۔

امریکہ اور اس کے مغربی اتحادیوں کی جانب سے یوکرین کو اربوں ڈالر کی مالی اور فوجی امداد دی گئی ہے تو کچھ امریکی قانون سازوں نے کہا ہے کہ یوکرینی حکومت کے شفاف طریقے سے کام کرنے کو یقینی بنانے کی زیادہ ضرورت ہے۔

حالیہ تنازع امریکی سرمایہ کاروں ’’ Argentem Creek Partners ‘‘ اور ’’ Inovatus ‘‘‘ کی جانب سے یوکرین کے جی این ٹی گروپ کی ایک کمپنی کو قرض دینے کے حوالے سے ہے۔ تنازع کی بنیاد 95 ملین ڈالر ہیں۔

یہ قرض یوکرین کی کمپنی کی ایکویٹی کے ذریعے حاصل کیا گیا تھا جس میں اوڈیسا میں واقع ملک کے سب سے بڑے اناج ٹرمینلز میں سے ایک شامل ہے۔

اس کے باوجود جی این ٹی گزشتہ برس امریکی کمپنیوں کو ادائیگی کرنے میں ناکام رہا اور پھر اس کے 130 ملین ڈالر کے اثاثوں پر معاملے کا تصفیہ کردیا گیا تھا۔ عدالتی فیصلوں کے مطابق یوکرین کے قانونی نظام کے کچھ حلقوں نے سرمایہ کاروں کی رقم کی وصولی کی کوششوں کی حمایت کی ہے۔

لیکن امریکی کمپنیوں نے الزام لگایا ہے کہ یوکرین کی بیوروکریسی کے مختلف حصوں بشمول انفراسٹرکچر اور وزارت انصاف کے حکام نے ان فیصلوں کو نافذ کرنے کی کوششوں میں رکاوٹ ڈالی ہے۔

یوکرینی محکمہ خارجہ کے حکام نے کہا کہ امریکی حکومت اس کیس سے آگاہ تھی اور اس نے یوکرین کے حکام سے اس پر بات کی تھی۔ حکام نے مقدمہ کے جاری رہنے کی طرف اشارہ کیا اور تفصیلات بتانے سے گریز کیا۔ یوکرین کے صدر زیلنسکی کو بدعنوانی کے خلاف کی جانے والی کوششوں پر اب بھی سوالات کا سامنا ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں