بائیڈن انتظامیہ نے سعودی عرب کے ساتھ تعاون کرنے میں دیر کر دی: ریپبلکن سینیٹر جِم رچ

80 سالوں سے سعودی عرب مشترکہ سلامتی اور اقتصادی مفادات کی حمایت میں ایک اہم پارٹنر رہا ہے: ٹویٹ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

امریکی سینیٹ کی خارجہ تعلقات کمیٹی میں سینئر ریپبلکن جم رچ نے امریکی صدر جو بائیڈن کی انتظامیہ سے مطالبہ کیا کہ وہ واشنگٹن کے لیے ایک اہم شراکت دار سعودی عرب کے ساتھ اقتصادی اور سلامتی کے حوالے سے تعلقات کو مضبوط کرے۔

رچ نے ٹویٹر پر کہا ہے کہ 80 سالوں سے سعودی عرب مشترکہ سلامتی اور اقتصادی مفادات کی حمایت میں امریکہ کا ایک اہم پارٹنر رہا ہے۔ انہوں نے کہا کہ بائیڈن انتظامیہ نے سعودی عرب کے ساتھ تعاون کو مضبوط کرنے میں دیر کر دی۔

اس تناظر میں امریکی وزیر خارجہ انتھونی بلنکن منگل کی شام سعودی عرب پہنچے جہاں سعودی حکام سے ملاقات میں وہ علاقائی اور عالمی مسائل پر سعودی امریکی سٹریٹجک، سکیورٹی اور اقتصادی تعاون سمیت متعدد دو طرفہ امور پر تبادلہ خیال کریں گے۔

بلنکن دو دن سعودی عرب میں گزاریں گے۔ وہ یو ایس گلف کوآپریشن کونسل کے ایک وزارتی اجلاس میں بھی شرکت کریں گے جس میں پورے مشرق وسطیٰ میں سلامتی اور استحکام کو بڑھانے، کشیدگی میں کمی، علاقائی انضمام اور اقتصادی مواقع کے شعبے میں تعاون پر تبادلہ خیال کیا جا رہا ہے۔

بلنکن سعودی وزیر خارجہ شہزادہ فیصل بن فرحان کے ساتھ ریاض میں داعش کو شکست دینے کے لیے عالمی اتحاد کے وزارتی اجلاس میں بھی شرکت کریں گے۔

امریکی سینیٹر کا یہ بیان اس وقت سامنے آیا ہے جب منگل کو امریکی محکمہ خارجہ نے سعودی عرب کے ساتھ اپنی سکیورٹی شراکت داری کو مضبوط بنانے کے لیے واشنگٹن کے عزم کی تصدیق کی ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں