ایردوان نے پہلی مرتبہ خاتون کو ترکیہ کے مرکزی بینک کا گورنر مقرر کردیا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

ترکیہ کے صدر رجب طیب ایردوان نے جمعہ کو امریکی مالیاتی اداروں کے لیے کام کرنے والی خاتون ’’حفیظہ غائی ارکان‘‘ کو مرکزی بینک کا گورنر مقرر کیا ہے۔ حفیظہ غائی ارکان پہلی خاتون ہیں کو ترکیہ کے مرکزی بینک کی سربراہ بنیں گی۔

حفیظہ غائی ارکان اس سے قبل فرسٹ ریپبلک بینک اور گولڈمین سیکس میں کام کر چکی ہیں۔ واضح رہے ایردوان نے 28 مئی کو ہونے والے صدارتی الیکشن میں کامیابی حاصل کی تھی۔

ترک نیوز ایجنسی اناضول نے آج جمعہ کو اطلاع دی کہ سرکاری گزٹ نے حفیظہ غائی ارکان کی تقرری کے حوالے سے ایردوان کے دستخط شدہ صدارتی فرمان شائع کیا ہے۔

 حفیظہ غائی ارکان ترکی کے مرکزی بینک کی نئی گورنر (بلومبرگ ایجنسی)
حفیظہ غائی ارکان ترکی کے مرکزی بینک کی نئی گورنر (بلومبرگ ایجنسی)

واضح رہے ترکیہ کے مرکزی بینک کے گورنر شہاب قفجی اوغلو کے بعد کون ان کی جگہ سنبھالے گا یہ مارکیٹ کے لیے ایک حساس معاملہ سمجھا جا رہا تھا۔

گزشتہ ہفتے ایردوان نے اپنی نئی حکومت میں امریکی میرل لنچ بینک کے بانڈ مارکیٹ کے ایک سابق ماہر محمد شمشیک کو وزیر خزانہ کے طور پر منتخب کیا تھا جو ترکیہ کے اپنی اقتصادی پالیسی کو ترک کرنے کے رجحان کی نشاندہی کرتا ہے۔ ماضی میں ایردوان کی حکومت نے لیرا کی حمایت کے لیے مارکیٹ میں بھاری حکومتی مداخلت کی تھی۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں