’’سعودی عرب دنیا کے 160 ممالک سے 20 لاکھ سے زائد عازمین کی میزبانی کرتا ہے‘‘

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

سعودی عرب میں حج و عمرہ کے وزیر توفیق الربیعہ نے تصدیق کی کہ سعودی عرب تاریخ کے سب سے بڑے اسلامی اجتماع کا خیرمقدم کرتا ہے، جس میں دنیا کے 160 ممالک سے 20 لاکھ سے زائد عازمین آتے ہیں۔

الربیعہ نے رحمان کے مہمانوں کے استقبال کے لیے ایک فلم کے دوران کہا، جسے وزارت نے اپنے ٹوئٹر اکاؤنٹ پر شائع کیا۔

انہوں زائرین کو فراہم کی جانے والی خدمات اور آسانی پر سعودی قیادت کا شکریہ ادا کیا۔

انہوں نے بتایا کہ مناسک حج کی ادائیگی کے لیے سعودی عرب آنے والوں کے لیے فلائٹ ریزرویشن کی تعداد 1.7 ملین ہےاور ان کی خدمت کے لیے 32,000 ہیلتھ پریکٹیشنرز مختص کیے گئے ہیں۔

الربیعہ نے مقدس مقامات میں نقل و حمل کے نظام پر بات کرتے ہوئے اس پر زور دیا کہ تینوں مقدس مقامات ایک مربوط انفراسٹرکچر سے لیس ایک مربوط ٹرانسپورٹ سسٹم سے منسلک ہیں، جن میں سب سے اہم مقامات مقدسہ کی ماحول دوست الیکٹرک ٹرین ہے۔جو 17 ٹرینوں پر مشتمل ہے اور 9 اسٹیشنوں پر تقسیم کی گئی ہیں، اور یہ 72,000 مسافر فی گھنٹہ کی گنجائش رکھتی ہے، اس کے علاوہ بس کے نظام میں 24,000 بسوں سے زیادہ موجود ہے۔

انہوں نے نشاندہی کی کہ قیادت نے تمام مقامات مقدسہ، خاص طور پر منیٰ میں، جو کہ دنیا کا سب سے بڑا خیموں کا شہر ہے، میں صحت اور حفاظتی خدمات اور آلات کے جدید نظام کا استعمال کیا ہے۔

مقدس مقامات پر سبزےکو بڑھانے کے تناظر میں، انہوں نے زور دیا کہ 130,000 درختوں تک پہنچنے کے لیے شجرکاری کا کام تیز کر دیا گیا ہے، جس سے ظاہر ہوتا ہے کہ وزارت حجاج کی سہولت کے لیے بھرپور کام کر رہی ہے.

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں