ویتنام نے فلم 'باربی' پر پابندی عائد کر دی، جانیے کیوں؟

اس فلم میں بحیرۂ جنوبی چین کے متنازعہ علاقے فلم بند کیے گئے تھے

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
3 منٹس read

ویتنام کے ریاستی میڈیا نے بتایا ہے کہ حکومت نے مقبول عام فلم 'باربی' کی ڈسٹری بیوشن (تقسیم کاری) پر پابندی عائد کر دی ہے کیونکہ اس میں ایک ایسے نقشے کا منظر پیش کیا گیا ہے جس میں بحیرۂ جنوبی چین کے اس متنازعہ علاقے کو دکھایا گیا ہے جس پر چین اپنی ملکیت کا دعویدار ہے۔

ویتنام ایکسپریس اخبار کے مطابق پیر کے روز ہونے والے فیصلے کے بعد فلم کے تقسیم کاروں کی ویب سائٹ سے وہ پوسٹرز ہٹا دیئے گئے ہیں جو فلم 'باربی' کی تشہیر کرتے ہیں۔

ویتنام کے سینما گھروں میں فلم 'باربی' کی نمائش 21 جولائی سے ہونا تھی جس میں ریان گوزلنگ کے مدمقابل مرگاٹ رابی نے باربی کا کردار ادا کیا ہے۔

رپورٹس کے مطابق، ویتنام سینما ڈیپارٹمنٹ کے ڈائریکٹر جنرل، وی کائن تھان نے کہا ہے کہ یہ فیصلہ ملک کی نیشنل فلم ایویلوایشن کونسل نے کیا ہے۔ کونسل نے کہا ہے کہ فلم میں چین کا "نائن-ڈیش لائن" دکھایا گیا ہے۔ یہ سمندر کا وہ متنازعہ علاقہ ہے جس پر چین ملکیت کا دعویدار ہے جبکہ یہ علاقے ویتنام اور دیگر ممالک کی ملکیت ہیں۔

نائن-ڈیش لائن ایک خفیہ مقام ہے مگر یہ چین اور اس کے ہمسایہ ممالک کے لئے حساس معاملہ ہے کیونکہ چین، بحیرۂ جنوبی چین کے بیشتر حصے پر اپنا حق جتاتا ہے، جبکہ ویتنام، ملائیشیا، فلپائن اور چین کے اس حق کو مسترد کرتے ہیں۔

2016 میں ایک بین الاقوامی عدالت نے فیصلہ سنایا تھا جس کی رو سے نائن-ڈیش لائن کی کوئی قانونی حیثیت نہیں اور سمندر کے متنازعہ حصے میں واقع ایک مخصوص معاشی زون پر فلپائن کا استحقاق تھا۔ جبکہ چین اس علاقے پر اپنا حق سمجھتا ہے۔ چین نے اس عدالتی فیصلے کو رد کر دیا تھا۔

چین کا مؤقف ہے کہ بحیرۂ جنوبی چین کا ایک بڑا علاقہ، نائن-ڈیش لائن کی حدود میں آتا ہے۔ چین، نائن-ڈیش لائن کو سمندر کے اس علاقے کی حد بندی کے لئے استعمال کرتا ہے جسے وہ اپنی بحری حدود خیال کرتا ہے۔

انڈونیشیا، ویتنام، ملائیشیا، برونائی اور فلپائن کے آسیان ممالک کے ساتھ چین کو اس مسئلے کی بنا پر کشیدگی کا سامنا ہے کیونکہ چین کی ماہی گیری کی کشتیاں اور فوجی بحری جہاز متنازعہ علاقے میں زیادہ جارحیت کا مظاہرہ کرنے لگے ہیں۔

جو کمپنیاں بیجنگ کے ان دعووں کے برخلاف کوئی تشہیری یا دیگر مواد تخلیق کرتی ہیں، وہ فوراً نظروں میں آ جاتی ہیں جس کی وجہ سے انہیں چینی صارفین اور حکومت کی جانب سے شدید ردعمل اور احتجاج کا سامنا کرنا پڑ سکتا ہے۔

وارنر برادرز کے دفاتر منگل کو 4 جولائی کی تعطیل کے لئے بند تھے۔

یاد رہے کہ2019 میں ویتنام نے ایک فلم Abominable کی نمائش منسوخ کر دی تھی۔ فلم بینوں نے اس فلم میں نائن-ڈیش لائن کا علاقہ دکھانے کی شکایت کی تھی۔

فلپائن میں سیاستدانوں نے احتجاج کے طور پر ڈریم ورکس کی تمام فلموں کے بائیکاٹ کا مطالبہ کیا ہے؛ جبکہ ملائیشیا نے فلم سے متنازعہ مناظر کو حذف کرنے کی ہدایت کی ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں