مزاحیہ ڈکیتی: ڈاکو سیلون میں داخل ہوا، چیخ پکار کی اور چوری کیے بغیر واپس چلا گیا

سیلون میں موجود چینی ملازمین کو چور کی بات سمجھ نہیں آئی، وہ حیران تھے کہ یہ شخص کیا چاہتا ہے

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

چوری اور ڈکیتی کی اکثر وارداتوں میں چور سامان چوری کرنے یا جانی اور مال نقصان اٹھانے اور پہنچانے کا باعث بنتے ہیں مگر امریکا میں ایک ایسی ڈکیتی کی ویڈیو سامنے آئی ہے جس میں ڈکیتی کی واردات ایک مزاحیہ اداکاری لگتی ہے۔

بیک وقت مزاحیہ اور غیر منطقی ڈکیتی میں ایک شخص چوری کی نیت سے امریکا کے ایک بیوٹی سیلون میں گھس گیا اور وہاں موجود دو خواتین ملازمین کے رویے سے حیران ہو کر خالی ہاتھ واپس لوٹا۔

’سی سی ٹی وی کیمروں سے ریکارڈ کی گئی ویڈیو میں ایک پستہ قامت شخص ٹوپی پہنے اور ایک خالی بیگ اٹھائے ایک بیوٹی سیلون میں گھس گیا۔ اس نے پیسے لینے کے لیے چیخنا چلانا شروع کر دیا اور چیخ چیخ کر پوچھنے لگا پیسے کہاں ہیں؟ مجھے پیسے دو۔"

وہاں موجود چینی ملازمین ایسے بیٹھی تھیں جیسے کچھ ہوا ہی نہیں۔ دراصل ان کی سمجھ نہیں آ رہا تھا کہ وہ شخص کیا کہہ رہا ہے۔

اس جگہ موجود اکاؤنٹس کے ملازم کو بھی سمجھ نہیں آ رہی تھی کہ چور کیا چاہتا ہے، اس نے چور سے حتیٰ المقدور بات کرنے کی کوشش بھی کی مگر اس کے پلے کچھ نہ پڑا۔ اس لیے وہ اس کے سامنے صرف حیران ہو رہے تھے۔ جب چور کو اندازہ ہوا کہ وہاں اسے کچھ نہیں مل سکتا وہ خالی ہاتھ وہاں سے چلا گیا۔ اس موقعے پر کسی قسم کا نقصان نہیں ہوا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں