’وزن زیادہ ہے طیارے کا اڑان بھرنا ناممکن؛ 20 مسافر رضاکارانہ جہاز سے اتر جائیں‘

صلاحیت سے زیادہ وزن کی وجہ سے جہاز کے کپتان کی مسافروں سے عجیب وغریب اپیل

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
3 منٹس read

ہسپانیہ کے ایک طیارے کے مسافروں کو اس عجیب صورتحال کا سامنا کرنا پڑا، جب طیارے کے کپتان نے 20 مسافروں کو اترنے کی درخواست کی۔ پائلٹ نے کہا کہ جہاز پر وزن زیادہ ہو چکا ہے اور یہ ٹیک آف کرنے کے قابل نہیں رہا۔" اس پر مسافروں میں تشویش پھیل گئی۔

سماجی رابطوں کی ویب سائٹس ریان ولیمز نامی شخص کی جانب سے پوسٹ کی گئی ایک ویڈیو کلپ شیئر کی جا رہی ہے۔ اسے ٹک ٹاک پر تقریباً 2 لاکھ لوگوں نے شیئر کیا۔ یہ ویڈیو "EasyJet" طیارے کے اندر سے بنائی گئی ہے۔ ویڈیو میں جہاز کے کپتان کو ٹیک آف کے وقت مسافروں کا وزن زیادہ ہونے کی وجہ سے 20 مسافروں کو اترنے کا کہتے سنا جا سکتا ہے۔

اکاؤنٹ ہولڈر نے ویڈیو پر یہ بھی لکھا کہ یہ ’پاگل پن‘ ہے۔ اس ویڈیو کو اب تک تقریباً 2 ملین بار دیکھا جا چکا ہے۔

یہ بات واضح رہے کہ ایسی درخواست کی اجازت صرف ایک صورت میں دی جاتی ہے، جب تکنیکی خرابی یا اس طرح کی کوئی چیز واقع ہو۔

بہت بھاری وزن

اپنی طرف سے پائلٹ نے کہا کہ "ہمارے ساتھ رہنے کے لیے آپ کا شکریہ، لیکن آج جہاز کا وزن بہت زیادہ ہے، آپ میں سے بہت سے لوگوں کی وجہ سے، اس طیارے کا وزن بھی یہاں لانزاروٹ میں نسبتاً مختصر رن وے کے ساتھ آتا ہے اور ایک اس وقت ہوا چل سکتی ہے۔"

انہوں نے مزید کہا کہ "میرا مطلب یہ ہے کہ یہاں لانزاروٹ میں موجودہ موسمی حالات کے پیش نظر اس وقت طیارہ بہت بھاری ہے جو کہ ٹیک آف نہیں کر سکتا۔ آپ سوچ رہے ہوں گے کہ آگے کیا ہوگا اور میں اب آپ سے کیوں بات کر رہا ہوں؟"

پائلٹ نے مزید کہا کہ "اگر ممکن ہو تو میں پوچھنا چاہوں گا کہ کیا 20 رضاکار ہیں جنہوں نے آج رات لیورپول کے لیے پرواز نہ کرنے کا انتخاب کیا ہے۔"

500 یورو فی مسافر

پائلٹ نے اعلان کیا کہ ایزی جیٹ ہر مسافر کے لیے 500 یورو تک کی رقم کی آفر کرے گی جو پرواز نہ کرنے کا انتخاب کرتا ہے۔

ایئر لائن کے ترجمان نے کہا کہ 19 مسافروں نے بالآخر پرواز کو چھوڑنے کے لئے رضاکارانہ طور پر خود کو پیش کیا.

لیورپول ایکو کے مطابق بدھ کی رات 9 بج کر 45 منٹ پر اسپین کے لانزاروٹ ایریسیف ہوائی اڈے سے لیورپول کے جان لینن ہوائی اڈے کے لیے جس پرواز کو اڑان بھرنا تھی وہ وزن میں اضافے اور خراب موسم کی وجہ سے تاخیر کا شکار ہوئی۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں