روس اور یوکرین

روس کا مغربی سفارت خانوں کے باہر یوکرین میں تباہ شدہ نیٹو سازوسامان کی نمائش کا اعلان

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

روس کی پارلیمان کے ایوان زیریں دوما کے اسپیکر ویاشیسلاف فولودین نے کہا ہے کہ یوکرین میں جنگی کارروائیوں میں تباہ کیے گئے نیٹو کے فوجی سازوسامان کی ماسکو میں نمائش کی جائے گی اور اس تباہ شدہ سامان کو مہیا کنندہ مغربی ممالک کے سفارت خانوں کے باہر ہی نمائش کے لیے رکھا جائے گا۔

فولودین نے یوکرین میں تباہ شدہ مغرب کے فوجی سازوسامان کو لانے اور اس کی نمائش کے انعقاد کا حکم جاری کیا ہے اور کہا ہے کہ’’یوکرین کو سامان بھیجنے والے ممالک کے سفارت خانوں کے قریب جلے ہوئے آلات نصب کرنے کی تجویز خاص طور پر دلچسپ ہے‘‘۔

روس کے اعلیٰ عہدے داروں نے یوکرین کو ہتھیار مہیا کرنے پر مغربی ممالک کو بارہا تنقید کا نشانہ بنایا ہے۔ ان کا کہنا ہے کہ ان سے تنازع کے طول پکڑنے اور مزید کشیدگی میں اضافے کا اندیشہ ہے۔

یوکرین نے فروری 2022 میں روس کے مکمل پیمانے پر حملے کے بعد سے اپنے دفاع اور روسی افواج کے زیر قبضہ علاقے واگذار کرانے کے لیے مغربی ممالک سے مزید ہتھیار مہیا کرنے کا مطالبہ کیا ہے۔

یوکرینی صدر ولودی میر زیلنسکی سکیورٹی کے طویل مدتی وعدوں کو محفوظ بنانے کے لیے لیتھوینیا میں 31 رکنی نیٹو اتحاد کے رہ نماؤں سے ملاقاتیں کر رہے ہیں جہاں فرانس ، برطانیہ ، آسٹریلیا اور جاپان نے انھیں مزید ہتھیار اور فوجی سازوسامان مہیا کرنے کے وعدے کیے ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں