ایران کیلئے امریکی خصوصی ایلچی راب میلے کا پیج محکمہ خارجہ کی ویب سائٹ سے ہٹا دیا گیا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

امریکی خصوصی ایلچی برائے ایران راب میلے جن سے ایف بی آئی تفتیش کر رہی ہے اور ان کی سکیورٹی کلیئرنس منسوخ کر دی گئی ہے کی سوانح عمری کا صفحہ اب محکمہ خارجہ کی ویب سائٹ سے ہٹا دیا گیا۔

دریں اثنا ہاؤس فارن افیئرز کمیٹی کے ریپبلکن رکن نے دھمکی دی ہے کہ اگر وہ رضاکارانہ طور پر راب میلے کی معطلی کے بارے میں معلومات فراہم نہیں کرتے ہیں تو محکمہ خارجہ کے اہلکاروں کے خلاف مزید قانونی اقدامات کیے جائیں گے۔

محکمہ خارجہ کی سرکاری لائن کے مطابق راب میلے فی الحال چھٹی پر ہیں۔ تحقیقات کے حوالے سے پیش رفت سے متعلق سوال پر سٹیٹ ڈپارٹمنٹ کے ترجمان نے کہا کہ ہمارے پاس رازداری کے تحفظات کی وجہ سے اس وقت اشتراک کرنے کے لیے مزید کچھ نہیں ہے۔

ترجمان نے ’’العربیہ‘‘کو بتایا کہ ایران کے لیے نائب خصوصی ایلچی ابرام پیلے اور بقیہ خصوصی ایلچی ٹیم ہماری روز مرہ کی ایران پالیسی کو تیار کرنے اور اس پر عمل درآمد کا اہم کام جاری رکھے ہوئے ہے۔ ترجمان نے مزید کہا کہ پیلے اس وقت نائب خصوصی ایلچی کے طور پر ٹیم کی قیادت کر رہے ہیں۔

میڈیا رپورٹس بتاتی ہیں کہ راب مالے خفیہ معلومات کو غلط طریقے سے ہینڈل کرنے کے حالے سے زیر تفتیش ہیں۔ ترجمان نے بتایا کہ ان کی سیکیورٹی کلیئرنس واپس لے لی گئی ہے لیکن انہیں یقین ہے کہ تحقیقات سے ان کی بے گناہی ثابت ہوگی۔

یاد رہے ایران کے لیے خصوصی ایلچی کے دفتر کے ٹوئٹر پیج پر راب میلے کی تصویر کو بھی بدل دیا گیا ہے۔

حکام نے العربیہ کو بتایا کہ انہیں بتایا گیا کہ راب میلے خاندانی وجوہات کی بنا پر چھٹی پر ہیں اور انہوں نے حیرت کا اظہار کیا جب گزشتہ ماہ یہ خبر پھیلی کہ مالی کو بغیر تنخواہ کے چھٹی پر رکھا گیا ہے۔

جمعہ کو میک کاول نے امریکی وزیر خارجہ انٹونی بلینکن کو ایک خط بھیجا جس میں راب میلے کی سیکیورٹی کلیئرنس معطلی سے متعلق حالات پر خفیہ بریفنگ کی درخواست کی گئی۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں