ہم نے یورپ میں یوکرینیوں کو ’’ ایف سولہ‘‘طیاروں کی تربیت دینے کی اجازت دیدی: امریکہ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

امریکہ کی قومی سلامتی کے مشیر جیک سلیوان نے کہا ہے کہ امریکہ میں گولہ بارود پیدا کرنے کی صلاحیت پپدا کرنا مشکل ہے اور اسے تیار کرنے کے لیے برسوں درکار ہیں۔ انتظامیہ نے وزارت دفاع کو اس میں تیزی لانے کے لیے کام کرنے کی ہدایت کر دی ہے۔

یورپی افراد تربیت دینگے

جیک سلیوان نے مزید کہا کہ واشنگٹن نے یوکرین کے باشندوں کو ایف 16 طیاروں کی یورپ میں تربیت کی اجازت دے دی جو اس بات کا اشارہ ہے کہ یوکرین میں میدان جنگ میں تبدیلی آ رہی ہے۔ انہوں نے کہا کہ امریکی سرکاری میل میں دراندازی کے ذریعۃ چین خفیہ دستاویزات حاصل کرنے میں کامیاب نہیں ہوا۔

زیلنسکی کا مسلسل مطالبہ

انہوں نے کہا زیلنسکی نے مسلسل اپنے ملک کو مغربی جنگی طیارے فراہم کرنے کا مطالبہ کیا ہے تاکہ 24 فروری 2022 سے جاری روسی حملے کے پیش نظر اپنے دفاع کو مضبوط کیا جا سکے۔

دوسری طرف روس کے وزیر خارجہ سرگئی لاوروو نے الیکٹرانک اخبار "لنٹارو" کو انٹرویو دیتے ہوئے خبردار کیا ہے کہ یوکرین کو جو ایف سولہ لڑاکا طیارے فراہم کیے جائیں گے ان کو ماسکو ایٹمی خطرہ تصور کرے گا۔

ایٹمی خطرہ

لاوروو نے اخبار کو بتایا کہ ہم یوکرینی افواج کی جانب سے ایسے نظاموں کے محض قبضے کو جوہری میدان میں مغرب کی طرف سے خطرہ تصور کریں گے۔ روس ان آلات کی ایٹمی ہتھیار لے جانے کی صلاحیت کو نظر انداز نہیں کر سکتا۔ انہوں نے مزید کہا کہ ماسکو نے امریکہ، برطانیہ اور فرانس کو خبردار کیا تھا۔

واضح رہے یہ جدید جنگی طیارے اپنے مغربی اتحادیوں سے کیف کے فوجی مطالبات میں سرفہرست تھے۔ لاوروو نے یوکرین کو ایف سولہ جنگی طیاروں کی منتقلی کے امریکی منصوبے کے بارے میں بات کی حالانکہ واشنگٹن نے کسی بھی ملک کو ان کے حوالے کرنے کی اجازت نہیں دی۔

تربیتی منصوبہ

نیدرلینڈز اور ڈنمارک گیارہ ممالک کے اتحاد کے حصے کے طور پر یوکرین کے پائلٹوں کو امریکی ساختہ طیارے استعمال کرنے کی تربیت دینے کے منصوبے کی قیادت کر رہے ہیں۔ امریکہ کی طرف سے اجازت ملنے کے بعد یہ پروگرام اگست میں ڈنمارک میں شروع ہوگا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں