سعودی پبلک فنڈ کا اونٹنی کے دودھ کی مصنوعات تیار کرنے والی کمپنی قائم کرنے کا اعلان

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

سعودی عرب کا پبلک انویسٹمنٹ فنڈ (پی آئی ایف) ایک نئی کمپنی قائم کر رہا ہے جس سے متعلق توقع ظاہر کی جا رہی ہے اس میں اونٹنی کے دودھ کی مصنوعات تیار کی جائیں گی۔

سعودی پریس ایجنسی (ایس پی اے) کے مطابق پی آئی ایف نے سوانی کمپنی قائم کرنے کا اعلان کیا ہے تا کہ یہ "کیمل فارمنگ کی سعودی صنعت کی نشو ونما کو فعال اور اس کی قابلِ تجدید ترقی میں سرگرم کردار ادا کرے۔"

مملکت کے پبلک انوسٹمنٹ فنڈ کے مشرق وسطیٰ اور شمالی افریقہ ریجن میں سرمایہ کاری ڈویژن میں صارف مصنوعات اور ریٹیل شعبے کے سربراہ ماجد العسافسعيد نے بتایا کہ "سعودی عرب کے پاس اونٹنی کے دودھ کی صنعت چلانے کا وسیع تجربہ اور علم ہے۔ نیز ہمارے پاس اس ضمن میں ضروری اہلیت اور وسیع تر ماحولیاتی نظام کو وسعت دینے کی غیر معمولی صلاحیت موجود ہے۔"

انہوں نے مزید کہا کہ "یہ عوامل پوری سپلائی چین میں ایک مسابقتی فائدہ کی نمائندگی کرتے ہیں، جو سرمایہ کاری کے ساتھ ساتھ، صنعت کی نمایاں ترقی کو فعال کرے گا اور حتمی طور پر علاقائی اور عالمی منڈیوں میں اونٹ کی ڈیری مصنوعات کی برآمد کا باعث بنے گا، جو غذائی فوائد کی حامل ہیں۔"

ایس پی اے کے مطابق سوانی کمپنی، پیداوار، تقسیم اور تشہیر کے تمام مراحل میں استحکام کو مرکزی حیثیت دے گی۔ یہ کمپنی صارفین میں اونٹ کے دودھ کی مصنوعات کے فوائد کا شعور پیدا کرے گی۔ اونٹ کے دودھ میں معدنیات، وٹامن اے، بی، سی، اور ای بڑی مقدار میں موجود ہوتے ہیں۔

پی آئی ایف ملک کے خوراک اور زراعت کے شعبے میں سرمایہ کاری کر رہا ہے، جس کا مقصد ویژن 2030 کے ایک حصے کے طور پر ملکی معیشت میں تنوع پیدا کرنے میں مدد دینا ہے۔ ایس پی اے کے مطابق، پی اے ایف نے 2017 سے اب تک 84 کمپنیاں قائم کی ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں