سویڈن نے عراق میں سفارتخانے کا عملہ حفاظت کے پیش نظر عارضی طور پر واپس بلا لیا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

سویڈن کی وزارت خارجہ کے مطابق بغداد میں سویڈش سفارتخانے کے عملے کو سکیورٹی وجوہات کی بنا پر عارضی طور پر سٹاک ہوم منتقل کر دیا گیا ہے۔

عراق نے سویڈن میں قرآن کریم کو نذرآتش کرنے کی اجازت دینے پر جمعرات کے روز سویڈش سفیر کو ملک سے واپس بھیج دیا تھا۔ اس سے قبل سینکڑوں مظاہرین نے قرآن کی گستاخی پر مبنی حرکت پر سویڈن کے سفارتخانے کو آگ لگا دی تھی۔

سویڈش وزارت خارجہ کے ایک بیان کے مطابق سٹاف اور آپریشنز کو عارضی طور پر سٹاک ہوم منتقل کر دیا جائے گا۔

عراق میں سفارتخانے پر حملے کے بعد سویڈن کے وزیر خارجہ ٹوبائس بیلسٹروم نے ایک بیان میں کہا تھا کہ "جو ہوا ہے وہ ناقابل قبول ہے اور حکومت ایسے حملوں کی سخت مذمت کرتی ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں