الجزائر کی 1.5 بلین ڈالر کے شراکت سے BRICS میں شامل ہونے کی درخواست

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

الجزائر نے BRICS گروپ میں شامل ہونے کی درخواست دی ہے۔

الجزائر کے النہار ٹی وی نے صدر عبدالمجید تیبون کے حوالے سے بتایا کہ الجزائر نے 1.5 بلین ڈالر کی شرکت کے ساتھ برکس بینک کا حصہ دار رکن بننے کی درخواست دی ہے۔

الجزائر کے صدر کا یہ اعلان اپنے دورہ چین کے اختتام پر سامنے آیا۔ انہوں نے کہا کہ الجزائر نے نئے اقتصادی مواقع کھولنے کے لیے برکس میں شامل ہونے کی کوشش کی ہے۔

شمالی افریقہ کا یہ ملک تیل اور گیس کے قدرتی وسائل سے مالا مال ہے اور اپنی معیشت کو متنوع بنانے اور چین جیسے ممالک کے ساتھ اپنی شراکت داری کو مضبوط بنانے کی کوشش کر رہا ہے۔

برکس ممالک کے گروپ میں برازیل، روس، بھارت، چین اور جنوبی افریقہ شامل ہیں۔ یہ دنیا کی آبادی کا 40 فیصد سے زیادہ اور عالمی معیشت کا تقریباً 26 فیصد ہے۔

اس ہفتے بلاک کے ساتھ تعلقات کے انچارج جنوبی افریقہ کے اعلیٰ سفارت کار نے کہا کہ 40 سے زائد ممالک نے برکس گروپ آف نیشنز میں شمولیت میں دلچسپی کا اظہار کیا ہے۔

ارجنٹینا، ایران، سعودی عرب، متحدہ عرب امارات، کیوبا، جمہوریہ کانگو، کوموروس، گبون اور قازقستان ان ممالک میں شامل ہیں جنہوں نے دلچسپی ظاہر کی۔

الجزائر کے مقامی میڈیا نے اس ہفتے کے خبر دی کہ چین الجزائر میں مینوفیکچرنگ، نئی ٹیکنالوجی، تعلیم، ٹرانسپورٹ اور زراعت سمیت مختلف شعبوں میں 36 بلین ڈالر کی سرمایہ کاری کرے گا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں