سویڈش سفارتخانہ پر حملے جیسے واقعات کی تکرار نہ ہونے دیں گے: عراق

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

عراقی حکومت نے ہفتے کے روز ملک میں موجود سفارتی مشنوں کو تحفظ فراہم کرنے کا یقین دلانے کی کوشش کی ہے۔ عراقی حکومت نے کہا کہ وہ سویڈن کے سفارت خانے پر حملے کی تکرار کی اجازت نہیں دے گی۔

وزارت خارجہ کی طرف سے یہ بیان اس واقعہ کے ایک دن بعد آیا جس میں سینکڑوں مظاہرین نے بغداد میں سویڈن کے سفارت خانے پر دھاوا بول دیا تھا۔ مظاہرین نے اسٹاک ہوم میں قرآن پاک کے نسخے کو نذر آتش کرنے کے منصوبے کے خلاف احتجاج کرتے ہوئے سفارتخانہ کی عمارت میں آگ لگا دی تھی۔ سویڈن میں قرآن کریم کی پھر بے حرمتی کے بعد عراق نے سویڈن کے سفیر کو ملک بدر کر دیا ہے۔

عراقی وزارت خارجہ نے کہا کہ عراقی حکومت ویانا کنونشن کی پوری طرح پابند ہے جو ممالک کے درمیان سفارتی تعلقات کو منظم کرتا ہے اور تمام رہائشی سفارتی مشنوں کو ان کی سلامتی اور تحفظ کا یقین دلاتا ہے۔ بغداد میں سویڈن کے سفارت خانے کے ساتھ جو ہوا اسے دہرایا نہیں جا سکتا۔ اسی طرح کا کوئی بھی عمل قانونی جوابدہی سے مشروط ہو گا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں