الجزائر میں ریکارڈ بلند درجہ حرارت اور آگ لگنے سے 34 افراد کی اموات

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

الجزائر کی وزارت داخلہ نے کل سوموار کواعلان کیا ہے کہ ملک کی متعدد ریاستوں میں جنگلات میں لگنے والی آگ سے ہلاکتوں کی تعداد 34 ہو گئی ہے، جن میں فوج کے 10 ارکان بھی شامل ہیں۔

inوزارت داخلہ نے ایک سابقہ بیان میں کہا تھا کہ جنگلات اور زرعی فصلوں میں 97 مقامات پر آگ لگی، ان میں سے کچھ آبادی والے دیہاتوں میں پھیل گئی۔

انہوں نے مزید کہا کہ حکام نے 1500 شہریوں کو وہاں سے نکالا۔ 6 ریاستوں میں آگ بجھانے کی کارروائیاں جاری ہیں۔

الجزائر کی وزارت دفاع نے مشرقی الجزائر کی ریاست بیجیا کے بنی کسیلا میں لگنے والی آگ میں 10 فوجیوں کی ہلاکت کا اعتراف کیا ہے۔ اس کے علاوہ فوجیوں میں مختلف نوعیت کے 25 زخمیوں کو ہسپتالوں میں منتقل کیا گیا ہے۔

وزارت دفاع نے ایک بیان میں کہا کہ زخمیوں کو براہ راست قریبی ہسپتالوں میں منتقل کیا گیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق "ریاست بیجیا میں لگی آگ کو بجھانے کے عمل کے دوران، ہوا کی طاقت میں اضافے کی وجہ سے آگ کا رخ بنی کسیلا میں واد داس کے علاقے میں فوج کے دستے کے مقام کی طرف ہوگیا۔ متعدد فوجی اہلکار آگ کی لپیٹ میں آگئے۔ بنی کسیلا کے علاقے میں واقع پیپلز نیشنل آرمی کے دستے سے تعلق رکھنے والے دس فوجیوں کی موت واقع ہوگئی جب کہ 25فوجیوں کے زخمی ہونے کےبعد انہیں ہسپتالوں میں لایا گیا ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں