سعودی کابینہ کی ڈنمارک، سویڈن میں قرآن کی بے حرمتی کی مذمت

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

سعودی کابینہ نے ولی عہد شہزادہ محمد بن سلمان کی سربراہی میں ایک اجلاس کے دوران ڈنمارک اور سویڈن میں اسلام کی توہین اور قرآن کی بے حرمتی کے واقعات کی سخت مذمت کی ہے۔

سعودی عرب کی خبر رساں ایجنسی ایس پی اے کے مطابق سعودی کابینہ نے ان 'شرمناک حرکات' کو بین الاقوامی قوانین کی خلاف ورزی قرار دیا۔

اس سے قبل بحرین نے منامہ میں سویڈن کی ناظم الامور کو طلب کیا ہے اور ایک باضابطہ احتجاجی مراسلہ ان کے حوالے کیا ہے جس میں پولیس کی حفاظت میں اسٹاک ہوم میں انتہاپسندوں کو قرآن کے نسخے جلانے کی اجازت دینے پر احتجاج کیا گیا ہے اور ان واقعات کی شدید الفاظ میں مذمت کی گئی ہے۔

ڈنمارک کے دارالحکومت کوپن ہیگن میں منگل کے روز ایک مرتبہ پھر قرآن مجید کی بے حرمتی کی گئی ہے اور اسلام مخالف مٹھی بھر کارکنوں نے مصر اور ترکیہ کے سفارت خانوں کے سامنے قرآن مجید کے نسخے نذرآتش کیے ہیں۔ڈنمارک میں ایک ہفتے سے بھی کم عرصے میں مسلمانوں کی مقدس کتاب کی بے توقیری کے یہ نئے واقعات ہیں۔

ڈنمارک اور سویڈن نے کہا ہے کہ وہ قرآن کو جلانے کی مذمت کرتے ہیں لیکن آزادیِ اظہار کے قوانین کے تحت اسے روک نہیں سکتے۔ان دونوں ملکوں میں تین مرتبہ قرآن مجید کی انتہائی بے توقیری کی گئی ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں