یورینیم والے ملک میں تشدد شروع، نیجر کی فوج کا باغی رہنماؤں سے وفاداری کا اعلان

معزول صدر محمد بازوم نے کہا شہری طویل جدوجہد کے بعد حاصل ہونے والے فوائد کی حفاظت کریں گے

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

"یورینیم والے ملک" نیجر میں فوج نے صدر محمد بازوم کی حکومت کا تختہ الٹنے والی دفاعی اور سکیورٹی فورسز کے ساتھ وفاداری کا اعلان کردیا۔ بدھ کی رات فورسز نے محمد بازوم کی حکومت کا تختہ الٹنے کا اعلان کیا تو افواج میں لڑائی کے حوالے سے پوری دنیا میں تشویش کی لہر دوڑ گئی تھی۔

جمعرات کو آرمی چیف آف سٹاف کے دستخط شدہ ایک بیان میں یہ بات سامنے آئی تھی کہ نیجر کے دارالحکومت میں تشدد پھوٹ پڑا ہے۔ اس سے قبل نیجر کے معزول صدر محمد بازوم نے کہا تھا کہ شہری طویل جدوجہد کے بعد حاصل ہونے والی کامیابیوں کی حفاظت کریں گے۔ ان کی طرف سےنیجر کے وزیر خارجہ حسومی مسعودو نے خود کو قائم مقام وزیر اعظم قرار دیتے ہوئے "بغاوت" کے خلاف مزاحمت کے لیے متحرک ہونے پر زور دیا۔ انہوں نے کہا کہ بازوم کی حکومت ہی جائز حکومت ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں