آسٹریلیا کے سابق چائلڈ کیئر ورکر کو 91 بچوں سے زیادتی کے الزام کا سامنا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
3 منٹس read

آسٹریلیا کے ایک سابق چائلڈ کیئر ورکر پر 91 بچوں کے ساتھ زیادتی کا الزام عائد کیا گیا ہے جسے پولیس نے منگل کو ملک میں بچوں کے جنسی استحصال کے "خوفناک ترین" واقعات میں سے ایک قرار دیا ہے۔

افسران نے مزید کہا کہ "اس پر 1,623 الگ الگ جرائم کا الزام لگایا گیا ہے جن میں آبروریزی کے 136 اور 10 سال سے کم عمر کے بچے کے ساتھ جنسی تعلق کے 110 الزامات شامل ہیں۔"

ڈارک ویب پر پوسٹ کی گئی گرافک چائلڈ پورنوگرافی دریافت کرنے کے بعد تفتیش کاروں نے اس 45 سالہ شخص کو گرفتار کیا۔ پس منظر میں بصری اشاروں کا استعمال کرتے ہوئے آخرِکار برسبین میں بچوں کی نگہداشت کے مرکز میں ان کا سراغ لگایا گیا۔

لیکن اس کے فون اور کمپیوٹر کی چھان بین کرنے کے بعد ہی افسران کو اس کے مبینہ "سفاکانہ" جرائم کی سنگینی کا احساس ہوا جو 4,000 سے زیادہ ضبط شدہ تصاویر اور ویڈیوز سے ظاہر ہوئے تھے۔

پولیس نے کہا کہ "یہ جرائم 2007 اور 2022 کے درمیان 10 مختلف چائلڈ کیئر سینٹرز میں رونما ہوئے اور "نابالغ بچیوں" کو خاص طور پر نشانہ بنایا گیا۔"

پولیس نے بتایا کہ "اس کے مبینہ متاثرین میں سے کچھ بچے ایک سال کی عمر کے تھے۔"

چونکہ 91 میں سے 87 بچوں کا تعلق آسٹریلیا سے ہے تو پولیس کا خیال ہے کہ باقی چار نامعلوم بچوں کو 2013 اور 2014 کے درمیان زیادتی کا نشانہ بنایا گیا جب ملزم نے ایک مختصر مدت کے لیے بیرونِ ملک کام کیا تھا۔

پولیس نے کسی ملک ک نام لیے بغیر بتایا کہ "وہ بین الاقوامی تفتیشی اداروں کے ساتھ مل کر ان چار بچوں کے بارے میں معلوم کرنے کے لیے کام کرر ہی ہے۔"

وفاقی پولیس کے اسسٹنٹ کمشنر جسٹن گف نے کہا کہ "شناخت شدہ بچوں اور ان کے والدین کو میں بہت زیادہ تسلی نہیں دے سکتا۔ یہ خاندانوں، بچوں کی نگہداشت کرنے والوں، اور کیمونٹی کے لیے وسیع پیمانے پر تکلیف اور دباؤ کا باعث ہے۔"

نیو ساؤتھ ویلز کے اسسٹنٹ پولیس کمشنرمائکل فٹزگیرالڈ نے کہا کہ "یہ ان کی زندگی کے دہشت ناک ترین کیسز میں سے ایک ہے۔"

انہوں نے کہا کہ "اس شخص نے بچوں کے ساتھ جو کیا، وہ کسی کے بھی تصور سے ماورا ہے۔ میں صرف یہ کہہ سکتا ہوں کہ پولیس میں اتنا طویل عرصہ گذارنے کے بعد کوشش کریں کہ آپ پریشان نہ ہوں لیکن یہ ایک دہشت ناک کیس ہے۔"

پولیس نے بچوں سے زیادتی کا جو مواد دریافت کیا، اس کے مکمل حجم کو تلاش کرنے کے لیے ایک ٹاسک فورس مقرر کی گئی جس میں کام کرنے کے لیے کوئنز لینڈ اور نیو ساؤتھ ویلز کی ریاستوں کے تقریباً 35 جاسوسوں اور تفتیش کاروں کو بلایا گیا تھا۔

پولیس نے بتایا کہ "اس شخص نے ماضی میں کیے گئے کام کی جانچ پڑتال کی سخت سیریز پاس کی تھی جو آسٹریلیا میں بچوں کی دیکھ بھال کے مراکز میں کام کرنے کے لیے درکار ہوتی ہے۔"

اس شخص کو 21 اگست کو کوئنز لینڈ میں عدالت میں پیش ہونا ہے۔

ایک دفعہ یہ کارروائی مکمل ہو جائے تو اسے مزید الزامات کا سامنا کرنے کے لیے نیو ساؤتھ ویلز کے حوالے کر دیا جائے گا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں