تپتی گرمی اور ایک سعودی شہر میں سردی کا لطف

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

سعودی عرب کے اکثر شہروں کو درجہ حرارت میں اضافے کے بعد شدید گرمی کا سامنا ہے۔

تاہم "ابہا" شہر کا رنگ نرالا ہے۔ ان دنوں اس پر فضا مقام کا فطری حسن دوبالا ہو گیا جب دلفریب فضا، ٹھنڈی تروتازہ آب و ہوا اور بارشوں کے ساتھ ساتھ ژالہ باری نے "السودہ" پہاڑوں کو سفید چادر سے ڈھانپ لیا۔

عسیر کے علاقے میں گذشتہ روز ہونے والی شدید بارش اور السودہ کے پہاڑوں اور دیہاتوں پر گرنے والے اولوں کے مناظر سوشل میڈیا پر بکھرے نظر آئے۔

ایسے میں فوٹوگرافر سعید المشہور بھی موسم کی خوبصورتی کو محفوظ کرنے میں کامیاب رہے جس سے علاقے بھر کے شہریوں اور سیاحوں نے لطف اٹھایا۔

خوبصورت ماحول اور فطرت سے لطف اندوز ہونے کے لیے مملکت کے مختلف خطوں اور خلیجی ممالک سے لوگ یہاں آتے ہیں۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ سے بات کرتے ہوئے انھوں نے کہا کہ ''عسیر کے علاقے میں بہت سے خوبصورت مقامات شامل ہیں جو دنیا کے خوبصورت ترین ممالک کی کا مقابلہ کرتے ہیں''۔

عسیر کے بڑے علاقے پر گذشتہ روز ہونے والی بارشوں کے شہریوں اور سیاحوں کی بڑی تعداد نے پارکوں اور تفریحی مقامات کا رخ کیا۔

گاڑیوں کے ہجوم کی وجہ سے ابہا اور خمیس مشیط شہروں کے مضافات کی طرف جانے والی سڑکیں بند ہو گئیں۔

پکنک منانے آئے خاندان اور سیاح بھی بارش اور ژالہ باری سے لطف اندوز ہوتے رہے اور تصاویر بناتے رہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں