غیراسلامی مواد دکھانے پرالجزائری ٹی وی چینل کے تمام شوز کی نشریات بند

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

جمعرات کی شام ایک چونکا دینے والا منظر دکھانے کے بعد الجزائر کے حکام نے اپنے ایک مقامی چینل کے تمام پروگراموں کی نشریات معطل کرنے کا اعلان کیا ہے۔

یہ واقعہ اس وقت سامنے آیا جب الجزائر کے سیٹلائٹ چینل ‘السلام‘ نے ایک فلم دکھائی جس میں ہم جنس شادی کا ایک سین بھی شامل تھا۔

کل جمعہ کو ملک کی آڈیو ویژول کنٹرول اتھارٹی نے السلام ٹی وی چینل کے نشر ہونے والے تمام پروگراموں کو عارضی طور پر معطل کرنے کا اعلان کیا۔

الجزائر کے پبلک ٹیلی ویژن سے نشرہونے والے ایک بیان میں آڈیو ویژول کنٹرول اتھارٹی نے کہا کہ "اتھارٹی نے السلام ٹی وی چینل پر نشر ہونے والے تمام پروگراموں کو عارضی طور پر معطل کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔

یہ فیصلہ چینل کے ایک ایسے پروگرام کی نشریات کے پس منظر میں کیا گیا ہے جس میں ایک ایسی فوٹیج موجود ہے جو غیر پیشہ ورانہ اور غیر ذمہ دارانہ، غیر اسلامی ، غیراخلاقی اور الجزائری روایات و اخلاق کے متصادم ہے۔

بیان میں کہا گیا ہے کہ السلام ٹی وی نے یہ پروگرام کل آدھی رات کو نشر کیا تھا۔

بیان کے مطابق ٹی وی کے پروگرامات پر پابندی تا اطلاع ثانی قائم رہے گی۔

تعزیرات کے آرٹیکل 338 کے مطابق الجزائر میں ہم جنسوں کی شادی غیر قانونی ہے اور اس پر سزا مقرر ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں