استنبول:فلیٹ کی بالکونی میں پھنسے عرب نوجوان کو اشاروں کی زبان نے اسے بچا لیا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
3 منٹس read

ترکیہ کے شہر استنبول میں ایک کثیر منزلہ عمارت کی چھٹی منزل پر اپنے فلیٹ کی بالکونی میں پھنس جانے والے غیر ملکی کے پاس نہ صرف باہر جانے کا کوئی راستہ نہ تھا بلکہ اس کے لیے دوسری مشکل یہ تھی کہ وہ ترک زبان نہیں بول سکتا تھا۔ اس لیے وہ اپنی مشکل کے بارے میں زبان سے بتانے سے قاصر تھا تاہم فلیٹ میں پھنسے نوجوان کو اشاروں کی زبان نے بچا لیا۔

مقامی ترک میڈیا کی طرف سے شائع کردہ ایک ویڈیو کلپ میں غیر ملکی شخص کو ’اویچلار‘ کے علاقے میں اپنے گھر کی بالکونی میں گھبرا کر کھڑا دیکھا جا سکتا ہے جو وہاں سے باہر نہیں نکل سکتا۔ راہگیروں سے بات کر کے ان سے مدد بھی نہیں مانگ سکتا کیونکہ وہ روانی سے ترکی نہیں بول سکتا۔

پریشان پڑوسی
پریشان پڑوسی

اس نوجوان کی شناخت حسن محمد کے نام سے کی گئی ہے جو ایک عرب شہری ہے۔ یہ شخص ترکی زبان نہیں بول سکتا لیکن اس نے مخالف بالکونی میں موجود پڑوسیوں سے اشاروں کی زبان میں بات کی اور کچھ ترکی میں ٹوٹے پھوٹے الفاظ بھی کہےجس سے انہیں اندازہ ہوا کہ یہ پھنسا ہوا ہے اور باہر نکلنا چاہتا ہے۔ وہ ترک زبان نہیں بول سکتا۔ انہیں یہ نہ بتا سکا کہ وہ بالکونی میں پھنس گیا ہے اور جس گھر میں وہ اکیلا رہتا ہے اس میں داخل نہیں ہو سکا۔

پڑوسیوں کو بھی اس کا مسئلہ سمجھنے میں گھنٹے لگ گئے۔ اس لیے وہ امداد کی نوعیت کی وضاحت کیے بغیر ریسکیو سروس سے رابطہ کرنے کے لیے پہنچ گئے۔ چنانچہ فائر فائٹرز اور پولیس آگ بجھانے کے لیے پہنچے۔ اس طرح اس کی مدد کی گئی۔

آگ بجھانے والی ٹیمیں سیڑھی کے ذریعے چھٹی منزل پر اس شخص تک پہنچنے میں کامیاب ہوئیں، جب وہ بالکونی میں خوفزدہ اور گھبرایا ہوا تھا۔

کئی مقامی میڈیا آؤٹ لیٹس کی طرف سے نشرکی جانے والی ویڈیو میں فائر فائٹنگ ٹیموں نے بالکونی کا دروازہ بھی کھولا اور غیر ملکی شخص کو بچا لیا جو اپنے گھر کی بالکونی میں گھنٹوں تک پھنسا ہوا تھا۔

حسن محمد نے فائر فائٹرز سے اشاروں کی زبان میں بات کرتے ہوئے انہیں بتانے کی کوشش کی کہ وہ بالکونی کا دروازہ نہیں کھول سکتا۔

عرب شہری کو محفوظ مقام پر منتقل کیا جا رہا ہے
عرب شہری کو محفوظ مقام پر منتقل کیا جا رہا ہے

حسن محمد تقریباً دو ہفتوں سے اس گھر میں مقیم ہے اور پولیس اور فائر بریگیڈ کی جانب سے اسے بالکونی سے باہر نکالنے کے بعد وہ قانونی مشکل میں پڑ گئے ہیں۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کے ذرائع کے مطابق حسن محمد کو قانونی مسئلہ درپیش ہے۔ اس کے پاس رہائشی کارڈ نہیں جو اسے ترکیہ کی سرزمین پر رہنے کی اجازت دیتا ہے۔ حسن محمد کو ضروری قانونی کارروائی کے لیے پولیس اسٹیشن منتقل کر دیا گیا۔

سیکیورٹی حکام اور مقامی میڈیا نے یہ نہیں بتایا کہ آیا پولیس نے اسے ملک بدر کرنے یا ترکیہ میں رکھنے کا فیصلہ کیا ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں