سعودی عرب برکس ممالک کے ساتھ مزید تعاون کا خواہاں

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

سعودی وزیر خارجہ نے کہا ہے کہ ان کا ملک برکس ممالک کے ساتھ مزید تعاون کو فروغ دینے کا خواہاں ہے۔

شہزادہ فیصل بن فرحان نے جوہانسبرگ میں برکس سمٹ سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ ’’ہم نئے ترقیاتی اور معاشی مواقع پیدا کرنے اور اپنے تعلقات کو مطلوبہ سطح تک لے جانے کے لیے باہمی تعاون کو فروغ دینے کے منتظر ہیں‘‘۔

شہزادہ فیصل نے کہا کہ سعودی عرب توانائی کا ایک قابل اعتماد ذریعہ رہے گا اوراس کے پاس توانائی کی مستحکم منڈیوں کو برقرار رکھنے کے لیے وسائل موجود ہیں۔

جنوبی افریقا کے صدر سیرل رامفوسا نے جمعرات کو اعلان کیا کہ اگلے سال کے آغاز میں سعودی عرب، متحدہ عرب امارات اور ایران سمیت چھے نئے ممالک کو برکس میں شامل کیا جائے گا۔

انھوں نے کہا کہ ہم نے ارجنٹائن ، عرب جمہوریہ مصر، وفاقی جمہوریہ ایتھوپیا، اسلامی جمہوریہ ایران، سعودی عرب اور متحدہ عرب امارات کو برکس کا مکمل رکن بننے کی دعوت دینے کا فیصلہ کیا ہے۔ رامفوسا نے جوہانسبرگ میں برکس سربراہ اجلاس سے خطاب میں کہا کہ ان ممالک کی رُکنیت کا اطلاق یکم جنوری 2024 سے ہوگا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں