بھارت میں لینڈ سلائیڈنگ سے گاؤں تباہ، کئی افراد کے دب جانے کا خدشہ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

مقامی میڈیا نے اطلاع دی ہے کہ بھارتی ریاست ہماچل پردیش میں کل جمعرات کو پہاڑی علاقے میں بہت بڑی لینڈ سلائیڈنگ ہوئی ہے۔ لینڈ سلائیڈنگ کے نتیجے میں ایک گاؤں کے کئی مکانات تباہ ہوگئے ہیں۔ خدشہ ہے کہ اس حادثے کے نتیجے میں متعدد افراد ملبے تلے دبے ہوئے ہیں۔

ٹیلی ویژن چینلوں نے ریاست کے کولو ضلع میں گرے ہوئے درختوں اور ملبے کے ساتھ ایک پہاڑی پر کئی عمارتوں کی گرنے کی تصاویر دکھائیں۔

ریاستی وزیر اعلیٰ نے کہا کہ محکمہ نے خطرات کی نشاندہی کی اور دو دن قبل ایک کمرشل عمارت کو خالی کرایا۔

ہماچل پردیش میں اس ماہ کے شروع میں مٹی کے تودے گرنے سے 50 سے زائد افراد ہلاک ہو گئے، مکانات منہدم ہو گئے اور سڑکیں تباہ ہوگئی تھیں۔

غیر معمولی طور پر شدید بارشوں اور گلیشیئر پگھلنے کی وجہ سے گزشتہ چند سالوں کے دوران پڑوسی ممالک بھارت، پاکستان اور نیپال کے پہاڑوں میں مہلک سیلاب آئے ہیں۔ حکومتی اہلکاران کی بڑی وجہ موسمیاتی تبدیلیوں کو قرار دیتے ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں