حیران کن واقعہ، مریض کے دماغ سے زندہ کیڑا نکل آیا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

طب کی تاریخ کے ایک حیرت انگیز واقعہ میں پہلی بار آسٹریلیا کے کینبرا ہسپتال کے ڈاکٹروں نے ایک 64 سالہ خاتون کے دماغ میں زندہ کیڑا دریافت کیا۔

اخبار "دی گارڈین" کی رپوٹ کے مطابق نیورو سرجن ڈاکٹر ہری پریا پانڈے مریضہ کے دماغ سے 8 سینٹی میٹر لمبا راؤنڈ وارم نکالنے میں کامیاب ہو گئے۔

مریضہ کو جنوری 2021 کے آخر میں نیو ساؤتھ ویلز کے ایک مقامی اسپتال میں پیٹ درد اور اسہال میں مبتلا ہونے کے بعد داخل کیا گیا تھا، اس کے بعد اسے مسلسل خشک کھانسی، بخار اور رات کو پسینہ آتا تھا۔

2022 میں علامات مزید خراب ہوئیں جن میں بھول جانا اور ڈپریشن شامل ہوگئے۔

اس کے بعد اسے کینبرا ہسپتال میں داخل کرایا گیا، جہاں دماغ کے ایم آر آئی اسکین نے راؤنڈ وارم کی موجودگی کا انکشاف کیا جس کے لیے سرجری کی ضرورت تھی۔

زندہ کیڑا (گارڈین)
زندہ کیڑا (گارڈین)

مریضہ صحت کی جانب گامزن

ہسپتال کے ڈاکٹر سنجیا سینانائیکے نے کہا کہ یہ "ان کی پیشہ ورانہ زندگی میں پہلا ایسا کیس ہے" ۔

سینانائیکے نے کہا کہ مریضہ کی صحت بہتر ہورہی اور وہ ابھی باقاعدہ طبی نگرانی میں ہے۔

انہوں نے کہا کہ یہ کیس طفیلیوں کے جانوروں سے انسانوں میں منتقل ہونے کے خطرے کو اجاگر کرتا ہے۔


سانپوں کا طفیلیہ

کیڑا نکالنے کے بعد لیبارٹری بھیجا گیا ہے۔ ایک سائنسدان نے تصدیق کی کہ یہ سانپوں میں پایا جانے والا کیڑا ہے۔

انسانوں میں اس طفیلیے کی دریافت کا پہلا واقعہ ہے۔

رپورٹ کے مطابق مریضہ ایک جھیل کے قریب رہتی ہے جس میں ایک خاص قسم کا سانپ پایا جاتا ہے۔

ماہرین کا خیال ہے کہ یہ کیڑا سانپوں سے گھاس اور انسان تک پہنچا ہوگا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں