بائیڈن نے ہنٹر تک معلومات پہنچانے کے لیے 5400 دستاویز پر تخلص کا استعمال کیا

جو بائیڈن نائب صدر کے طور پر اثر و رسوخ کا شکار ہوگئے تھے: سربراہ نگران کمیٹی کانگریس

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

نیویارک پوسٹ کے مطابق امریکہ کی نیشنل آرکائیوز اینڈ ریکارڈز کی انتظامیہ نے اعتراف کیا ہے کہ اس کے پاس تقریباً 54 سو ای میلز اور الیکٹرانک ریکارڈز ہیں جن میں صدر جو بائیڈن نے نائب صدر کے طور پر اپنے دور میں اپنے نام کی جگہ عرفی نام استعمال کیا تھا۔

جون 2022 کے فریڈم آف انفارمیشن ایکٹ کے تحت نیشنل آرکائیوز اینڈ ریکارڈز کی انتظامیہ نے سائوتھ ایسٹرن لیگل فاؤنڈیشن گروپ کی درخواست کے جواب میں دستاویز کی موجودگی کی تصدیق کی۔

درخواست میں رابن ویئر، رابرٹ ایل پیٹرز اور جے آر بی ویئر کے اکاؤنٹس سے متعلق ای میلز کی درخواست کی گئی تھی۔ یہ تمام عرفی نام 80 سالہ صدر کے بارے میں جانا جاتا تھا۔ یہ نام نائب صدر براک اوباما کے دور میں وائٹ ہاؤس میں استعمال کئے جاتے تھے۔

ساؤتھ ایسٹرن لیگل فاؤنڈیشن نے پیر کے روز نیشنل آرکائیوز اینڈ ریکارڈز ایڈمنسٹریشن کے خلاف ریکارڈ کے اجرا پر مقدمہ دائر کیا۔ جس کے بارے میں گروپ کا دعویٰ ہے کہ بائیڈن نے سرکاری معلومات کو اپنے بیٹے ہنٹر بائیڈن اور دیگر کو بھیجا اور سرکاری کاروبار پر تبادلہ خیال کیا۔

فاؤنڈیشن نے ایک بیان میں بتایا کہ اکثر اوقات سرکاری اہلکار اپنی طاقت کو اپنے ذاتی یا سیاسی فائدے کے لیے استعمال کرتے ہیں۔ جب وہ ایسا کرتے ہیں تو بہت سے لوگ اسے چھپانے کی کوشش کرتے ہیں۔ نیشنل آرکائیوز اینڈ ریکارڈز ایڈمنسٹریشن تقریباً 5,400 ای میلز شائع کرے گی جو بائیڈن نے اپنے تخلص کے تحت بھیجی ہیں۔ فاؤنڈیشن کے جنرل کونسلر کمبرلی ہرمن نے کہا کہ امریکی عوام یہ جاننے کے مستحق ہیں کہ اندر کیا ہے۔

واضح رہے ادارہ نیشنل آرکائیوز اینڈ ریکارڈز انتظامیہ پر قانون پر عمل درآمد کی درخواست کے جواب میں "سست روی" کا الزام لگایا گیا تھا۔ نیشنل آرکائیوز نے یہ کہتے ہوئے جواب دیا کہ ہم نے 9 جون 2022 سے متعلق ریکارڈ کے لیے اپنے گروپ کی تلاش کی اور تقریباً 5,138 ای میلز، 25 الیکٹرانک فائلوں اور 200 صفحات کے ریکارڈ کی نشاندہی کی ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں