سعودی وزیر صنعت اور معدنی وسائل کی ترک کمپنیوں کے حکام سے دوطرفہ تعاون پربات چیت

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

سعودی عرب کے وزیر صنعت اور معدنی وسائل بندر الخریف نے ترکیہ کی متعدد نمایاں کمپنیوں کے عہدے داروں سے الگ الگ ملاقاتیں کی ہیں اور ان سے دونوں ملکوں کے درمیان صنعت اور کان کنی شعبے میں دوطرفہ تعاون بڑھانے پر تبادلہ خیال کیا ہے۔

بندرالخریف نے ترکیہ کا یہ سرکاری دورہ دونوں ممالک کے درمیان دوطرفہ تعاون کو بڑھانے اور سرمایہ کاری کے مواقع کا جائزہ لینے کے لیے کیا ہے۔

سعودی وزیر نے ترکیہ کی تعمیراتی کمپنی اتاک مہندسلِک اور ایتی معدن کمپنی کے حکام کے ساتھ الگ الگ ملاقاتوں میں تعمیرات اور کان کنی کے شعبوں میں دوطرفہ تعاون پر تبادلہ خیال کیا۔

مزید برآں ، انھوں نے ترک کمپنی توسیالی ہولڈنگ کے ساتھ تعاون کے مواقع کا بھی جائزہ لیا۔یہ خام اسٹیل کی پیداوار میں دنیا کی سب سے بڑی کمپنیوں میں سے ایک ہے۔

سعودی وزیر نے سبانچی ہولڈنگ کمپنی کے عہدے داروں کے ساتھ صنعت اور کان کنی کے شعبوں میں تعاون پر تبادلہ خیال کرنے کے علاوہ ، یاسر گروپ اور کوچ ہولڈنگ دونوں کمپنیوں کے ساتھ مہارت اور تجربات کے تبادلے پرگفتگو کی ہے۔

سعودی وزیرکے اس دورے کا اہم مقصد ترکیہ کے ساتھ بالخصوص صنعت اور کان کنی کے شعبوں میں مشترکہ تعاون کو بڑھانے اور دونوں ممالک کے درمیان برآمدات تک رسائی میں اضافہ ہے۔

بندرالخریف نے دورے میں ترک حکومت کے متعدد وزراء، اعلیٰ عہدے داروں اور نجی شعبے کے سرمایہ کاروں سے ملاقات کی ہے اور ان سے مخصوص شعبوں میں معیاری غیرملکی سرمایہ کاری کو راغب کرنے پربات چیت کی ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں