مراکش زلزلہ

عالمی رہ نماؤں کا زلزلے سے متاثرہ مراکش کے ساتھ اظہارِ یک جہتی،امداد کے اعلانات

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size

مراکش میں تباہ کن زلزلے کے نتیجے میں ہلاکتوں کی تعداد بڑھ کر 1037 ہو گئی ہے۔دنیا بھر کے ممالک اور رہ نماؤں نے مراکش کے ساتھ اس تباہ کن زلزلے کے بعد یک جہتی کا اظہارکیا ہے،اس میں انسانی جانوں کے ضیاع پر گہرے دکھ اور افسوس کا اظہار کیا ہے اور متاثرہ علاقوں میں امدادی ٹیمیں اور سامان پہنچانے کے اعلانات کیے ہیں۔

مراکش میں شدید زلزلے پر غیر ملکی حکومتوں اور رہ نماؤں کے ردعمل کی مختصر تفصیل حسب ذیل ہے:

ولادی میرپوتین

روسی صدر ولادی میر پوتین نے مراکش کے شاہ محمد ششم کے نام پیغام میں کہا ہے:’’براہِ مہربانی اپنے ملک کے وسطی علاقوں میں تباہ کن زلزلے کے الم ناک نتائج پر میری دلی تعزیت قبول کریں۔ روس مراکش کے دوستانہ عوام کے دکھ، تشویش اور غم میں برابر شریک ہے۔ براہِ کرم متاثرین کے اہل خانہ اور دوستوں کے ساتھ ہماری طرف سے ہمدردی اور حمایت کے الفاظ کا اظہار کریں۔ہم اس قدرتی آفت کے نتیجے میں متاثر ہونے والے تمام لوگوں کی جلد صحت یابی کے لیے دعا گو ہیں‘‘۔

ترک صدر

ترک صدر رجب طیب ایردوآن نے ایکس پر ایک پوسٹ میں کہا کہ ’’ہم اس مشکل وقت میں اپنے مراکشی بھائیوں کے ساتھ کھڑے ہیں‘‘۔

ترکیہ کی وزارت خارجہ نے ایک الگ بیان میں کہا ہے کہ انقرہ مراکش میں زلزلے کے نتیجے میں زخموں پر مرہم رکھنے کے لیے ہر قسم کی مدد مہیّا کرنے کو تیار ہے۔

الجزائر

سرکاری ٹی وی کے فیس بک پیج پر الجزائری وزارت خارجہ کے حوالے سے کہا گیا ہے کہ الجزائرپڑوسی ملک مراکش میں زلزلے سے انسانی جانوں کے ضیاع پر متاثرہ اپنے بھائیوں کے ساتھ دلی تعزیت کا اظہار کرتا ہے۔

الجزائر نے مراکش کے متعدد علاقوں میں آنے والے تباہ کن زلزلے کے الم ناک نتائج پر گہرے دکھ اور افسوس کا اظہار کیا ہے۔

جرمن وزیرخارجہ

جرمن وزیرخارجہ انالینا بیئربوک نے ایک بیان میں کہا کہ مراکش سے خوف ناک تصاویر ہم تک پہنچ رہی ہیں۔ مراکش کے عوام کے ساتھ مل کر، ہم خوفناک زلزلے کے متاثرین کا سوگ مناتے ہیں۔ہمارے خیالات ان کے ساتھ ہیں اور ان تمام لوگوں کے ساتھ ہیں جو ان لمحات میں زندہ دفن ہونے والوں کی تلاش کر رہے ہیں اور بہت سے زخمیوں کی زندگیوں کے لیے لڑ رہے ہیں۔

فرانسیسی صدر

عمانوایل ماکروں نے اپنے پیغام میں کہا’’مراکش میں خوف ناک زلزلے کے بعد ہم سب صدمے میں ہیں۔ فرانس ابتدائی طبی امداد مہیا کرنے کو تیار ہے‘‘۔

قائم مقام ہسپانوی وزیراعظم پیڈرو سانچیز

’’خوفناک زلزلے کے مقابل مراکش کے عوام کے ساتھ تمام یک جہتی کا اظہار کرتا ہوں۔ ... اسپین اس سانحے کے متاثرین اور ان کے اہل خانہ کے ساتھ کھڑا ہے‘‘۔

سویڈش وزیراعظم الف کرسٹرسن

گذشتہ رات مراکش میں تباہ کن زلزلہ آیا۔ ہماری ہمدردیاں متاثرین اور ان کے پیاروں کے ساتھ ہیں۔

عراقی وزیر اعظم

محمد شیاع السودانی کے دفتر سے جاری ہونے والے ایک بیان میں کہا گیا ہے کہ وزی اعظم نے مراکش کی حکومت اور عوام سے تعزیت کا اظہار کیا اور کہا کہ عراق متاثرین کو ہر قسم کی مدد مہیا کرنے کو تیار ہے۔

اطالوی وزیراعظم

وزیر اعظم @GiorgiaMeloni نے مراکش میں آنے والے تباہ کن زلزلے کے الم ناک نقصانات کے بارے میں افسوس کا اظہار کیا ہے۔ میلونی کے دفتر نے کہا کہ انھوں نے مراکشی وزیراعظم اور عوام کے ساتھ اس ہنگامی صورت حال میں اٹلی کی جانب سے مکمل یک جہتی کا اظہار کیا ہے۔

غیر ملکی امداد کی پیش کش

ترکیہ

ترک وزارتِ خارجہ نے کہا ہے کہ انقرہ مراکش میں زلزلے کے زخموں پر مرہم رکھنے کے لیے ہر قسم کی مدد مہیا کرنے کو تیار ہے۔

فرانس

فرانسیسی وزارت خارجہ نے ایک بیان میں کہا کہ وہ اس سانحے سے متاثرہ آبادیوں کو بچانے اور مدد کے لیے فوری طور پر اپنی مدد مہیا کرنے کو تیار ہے۔

پیرس ریجن کی صدر ویلری پیکریس نے کہا کہ وہ مراکش کے لیے پانچ لاکھ یورو (5 لاکھ 35 ہزار ڈالر) کی امداد کی پیش کش کر رہے ہیں۔

مارسیل کے میئر بینوت پایان نے کہا کہ مراکش میں عملہ کو بچانے میں مدد کے لیے فائرمین بھیجے جائیں گے، انھوں نے مزید بتایا کہ زلزلے سے متاثرہ مراکش مارسیل کا ’’جڑواں شہر‘‘ہے۔

اسپين

ہسپانوی وزیرخارجہ ہاؤزے مینوئل البرس نے نئی دہلی میں جی 20 اجلاس کے دوران میں کہا:’’اسپین کا فوجی ایمرجنسی یونٹ اور ہمارا سفارت خانہ اور قونصل خانے مراکش کے کنٹرول میں ہیں‘‘۔

اسپین کے فائر فائٹرز ود آؤٹ فرنٹیئرز کے صدر انتونیو نوگالیس نے ہسپانوی ٹیلی ویژن کو بتایا:’’ہم مراکشی حکام کے ساتھ رابطے میں ہیں اور ہم انھیں مدد کرنے کوتیار ہیں۔ یہ تنظیم فروری میں ترکیہ میں آنے والے تباہ کن زلزلے میں زندہ بچ جانے والوں کی تلاش میں مدد کرنے میں شامل تھی۔

اسرائيل

وزیرخارجہ ایلی کوہن نے کہا کہ اسرائیل اس مشکل وقت میں مراکش کی طرف ہاتھ بڑھا رہا ہے اور جیسے ہی ہمیں مراکش میں آنے والے زلزلے کی خبر ملی، ہم نے فوری طور پر اپنی حکومت کو انسانی امداد مہیا کرنے اور متاثرین کو بچانے میں تعاون کی پیش کش کی ہدایت کی ہے۔

تُونس

تُونس کے صدر قیس سعید نے اپنے حکام کو مراکشی حکام کے ساتھ فوری امداد کے لیے رابطے کی ہدایت کی ہے اور انھیں تلاش اور بچاؤ کی کوششوں میں مدد کے لیے شہری تحفظ کی ٹیمیں بھیجنے کا اختیار دیا ہے۔انھوں نے تُونسی ہلال احمر کے ایک وفد کو امدادی کارروائیوں میں حصہ لینے اور زخمیوں کو متاثرہ علاقوں سے نکالنے کے لیے بھیجنے کی بھی ہدایت کی ہے۔

رومانيا

رومانیا کے وزیر اعظم مارسل سیولاکو نے کہا ہے کہ ’’رومانوی حکام مراکشی حکام کے ساتھ قریبی رابطے میں ہیں اور مدد کی پیش کش کے لیے تیار ہیں‘‘۔

تائیوان

تائیوان کے فائر ڈپارٹمنٹ کا کہنا ہے کہ اس نے مراکش جانے کے لیے 120 امدادی کارکنوں کی ایک ٹیم تیار کی ہے جو تائیوان کی وزارت خارجہ سے ہدایات ملتے ہی وہاں روانہ ہوجائے گی۔

غیر ملکی شہریوں کی مدد

فرانسیسی وزارت خارجہ نے کہا کہ مراکش میں اس کے سفارت خانے اور پیرس میں وزارت نے ’’اپنے ہم وطنوں کی طرف سے معلومات یا مدد کے مطالبات کا جواب دینے کے لیے‘‘کرائسس سنٹر کھول دیے ہیں۔

جرمنی

جرمن وزارت خارجہ کے ترجمان نے مزید تفصیل فراہم کیے بغیر بتایا کہ رباط میں جرمن سفارت خانے نے زلزلے سے متاثرہ اپنے شہریوں کے لیے ایک ہنگامی نمبر دیا ہے اور وہ مقامی حکام کے ساتھ قریبی رابطے میں ہیں۔

اسرائيل

اسرائیلی وزارت خارجہ کا کہنا ہے کہ وہ مراکش میں موجود اپنے شہریوں کے مقامات کی نشان دہی کر رہی ہے، ان کے ساتھ بات چیت کر رہی ہے اور ان کی جانچ کر رہی ہے۔

روس

رباط میں روسی سفارت خانہ اور کاسابلانکا میں قونصل خانہ مراکشی حکام کے ساتھ مسلسل رابطے میں ہیں۔روسی وزارت خارجہ کی ترجمان ماریا زخروفا نے ایک بیان میں کہا کہ ہمارے سفارت کاروں کے مطابق زلزلے کے متاثرین میں کوئی روسی شہری شامل نہیں ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں