آسٹرین وفد کا شاہ عبدالعزیز پبلک لائبریری کا دورہ، اسلامی سکوں پر بریفنگ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

آسٹریا کے ایک وفد نے سعودی عرب کے دارالحکومت الریاض میں کنگ عبدالعزیز پبلک لائبریری کی جانب سے کی جانے والی نمایاں ثقافتی کوششوں اور اس کی جانب سے فراہم کی جانے والی ثقافتی اور علمی خدمات کی تعریف کی۔

انہوں نے شاہ عبدالعزیز پبلک لائبریری کی بین الاقوامی ثقافت کو تقویت دینے، متنوع ثقافتی کاموں کو فروغ دینے اور مملکت کے ورثے کی خدمات کو سراہا۔

آسٹریا کے وفد نے شاہ عبدالعزیز پبلک لائبریری کا دورہ کیا جہاں وفد کا استقبال لائبریری کے جنرل سپروائزر فیصل بن معمر، ڈپٹی جنرل سپروائزر ڈاکٹر عبدالکریم الزید اور لائبریری کے جنرل ڈائریکٹر ڈاکٹر بندرالمبارک نے کیا۔

الوفد النمساوي

آسٹریا کے وفد میں ثقافتی امور کے انڈرسیکرٹری برائے خارجہ امور کرسٹوف ٹون ہولینشین، مملکت میں آسٹریا کے سفیر آسکر فیسٹنگر، ویانا سٹیٹ پارلیمنٹ کے ممبر عمر الراوی، ویانا سٹی کونسل کے ممبر، سفیر پیٹر پرزیوسکی، وزارت خارجہ میں یونیسکو کے شعبہ کے سربراہ اور پیرس میں یونیسکو میں آسٹریا کی سفیر ریجینا فیگل اور یونیسکو کے ثقافتی ورثے کے لیے ویانا شہر کے کمشنر روڈولف سونکے شامل تھے۔

یہ وفد یونیسکو کی عالمی ثقافتی ورثہ کمیٹی کے پینتالیسویں توسیعی اجلاس کے کے موقعے پر سعودی عرب کے دورے پر آیا جو یونیسکو کے اجلاس میں آسٹریا کی نمائندگی کررہا ہے۔ یہ اجلاس اس وقت ریاض میں منعقد ہورہا ہے جو 25 ستمبر 2023 تک جاری رہےگا۔

آسٹریا کے وفد نے اپنے پراجیکٹس اور اس سے حاصل کردہ نایاب کتابوں کے ذخیرے کا بھی جائزہ لیا۔ وفد نے شہزادی ایلس کی 1938ء میں سعودی عرب کے دورے کے دوران شاہ عبدالعزیز آل سعود سے ملاقات کی تصاویر بھی ملاحظہ کیں۔ وفد نے پبلک لائبریری کے زیراہتمام پرانے اسلامی کرنسی سکوں کی نمائش بھی دیکھی اور وہاں پرموجود تاریخی نوادرات کو سراہا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں