ایران وسعودی عرب

ایرانی صدر رئیسی کے سعودی فرمانروا شاہ سلمان اور ولی عہد محمد بن سلمان کے نام خطوط

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

سعودی فرمانروا شاہ سلمان بن عبدالعزیز اور ولی عہد شہزادہ محمد بن سلمان کو ایرانی صدر ابراہیم رئیسی کی جانب سے بھیجے گئے الگ الگ خطوط موصول ہوئے ہیں۔ان میں انھوں نے دونوں ملکوں کے درمیان دوطرفہ تعلقات اور انھیں بہتر بنانے کے طریقوں پر اظہارخیال کیا ہے۔

سعودی پریس ایجنسی کے مطابق نائب وزیر خارجہ ولید الخریجی کو یہ خطوط الریاض میں ایران کے نئے سفیر علی رضا عنایتی نے ایک استقبالیہ تقریب کے دوران میں پیش کیے ہیں۔

ایس پی اے کے مطابق استقبالیے میں الخریجی نے ایرانی سفیر کا خیرمقدم کیا اوران کے نئے فرائض منصبی کامیابی سے نبھانے کے لیے نیک تمناؤں کا اظہار کیا۔علی رضا عنایتی 5 ستمبر کو سرکاری حیثیت میں الریاض پہنچے تھے۔

سعودی وزارتِ خارجہ کے جنرل ڈپارٹمنٹ برائے ایشیائی امور کے ڈائریکٹر جنرل سفیر محمد المطرفی بھی اس موقع پر موجود تھے۔

دونوں سابق علاقائی حریفوں نے مارچ میں چین کی ثالثی میں اپنے اختلافات کو بالائے طاق رکھ کر سفارتی تعلقات بحال کرنے کا معاہدہ کیا تھا۔دونوں ملکوں کے درمیان سات سال 2016ء میں تہران میں ایرانی حکومت کے حامیوں کے سعودی سفارت خانے اور مشہد میں قونصل خانے پر حملے کے بعد تعلقات منقطع ہوگئے تھے۔

مارچ میں طے شدہ معاہدے کے تحت الریاض اور تہران نے ایک دوسرے کے ممالک میں سفارت خانے اور قونصل خانے دوبارہ کھولنے اور 20 سال قبل دست خط کیے گئے سکیورٹی اور اقتصادی تعاون سے متعلق معاہدوں پر عمل درآمد سے اتفاق کیا تھا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں