مالٹا: امریکا کے قومی سلامتی کے مشیر کی چینی وزیر خارجہ سے بات چیت

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

وائٹ ہاؤس کے قومی سلامتی کے مشیر جیک سلیوان نے مالٹا میں چین کے وزیر خارجہ وانگ یی سے اختتام ہفتہ پر بات چیت کی ہے۔

ایک امریکی عہدہ دار نے اتوار کے روز اس ملاقات کی اطلاع دی ہے اور کہا کہ دنیا کی دو بڑی معیشتیں اپنے کشیدہ تعلقات کو بہتر بنانے کی کوشش کر رہی ہیں۔

جیک سلیوان کی وانگ یی کے ساتھ ملاقات امریکی اور چینی حکام کے درمیان اعلیٰ سطح پر بات چیت کے سلسلے کی تازہ کڑی ہے اور یہ اس سال کے آخر میں صدر جو بائیڈن اور چینی صدر شی جن پنگ کے درمیان مجوزہ ملاقات کی بنیاد بن سکتی ہے۔سلیوان نے وانگ یی سے آخری بار مئی میں ویانا میں ملاقات کی تھی۔

بائیڈن نے رواں ماہ اس بات پر مایوسی کا اظہار کیا تھا کہ شی جن پنگ نے بھارت میں منعقدہ جی 20 سربراہ اجلاس میں شرکت نہیں کی تھی۔ جو بائیڈن کے لیے شی جن پنگ کے ساتھ بات چیت کا اگلا موقع نومبر میں سان فرانسِسکو میں ایشیا پیسفک اکنامک کوآپریشن (اے پی ای سی) کا سربراہ اجلاس ہوسکتا ہے۔

امریکی وزیرتجارت جینا ریمنڈو، وزیر خارجہ انٹونی بلینکن اور وزیر خزانہ جینٹ یلین نے رواں سال چین کا دورہ کیا تھا تاکہ دونوں ممالک کے درمیان مسلسل رابطے کو یقینی بنایا جا سکے۔

صدر جو بائیڈن اور شی جن پنگ کے درمیان آخری ملاقات 2022 میں انڈونیشیا کے جزیرے بالی میں جی 20 سربراہ اجلاس کے موقع پر ہوئی تھی۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں