ترک صدر ایردوان نے ایلون مسک سے کہا کہ وہ ترکیہ میں ٹیسلا کی ساتویں فیکٹری کھولیں

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

انادولو ایجنسی نے اتوار کو سوشل میڈیا پلیٹ فارم ایکس پر پوسٹ کیا کہ ترک صدر رجب طیب ایردوان نے ٹیسلا کے سی ای او ایلون مسک سے ترکیہ میں ٹیسلا فیکٹری بنانے کے لیے کہا۔

ترکیہ کی سرکاری خبر رساں ایجنسی نے بتایا کہ ایردوان نے نیویارک میں اقوامِ متحدہ کے قریب ایک فلک بوس عمارت ترک ہاؤس میں ملاقات کے دوران مسک سے یہ بات کہی۔

مسک پیر کو کیلیفورنیا میں اسرائیلی وزیر اعظم بنجمن نیتن یاہو سے بھی ملاقات کریں گے۔ مسک نے ایکس پر پوسٹ کیا کہ مصنوعی ذہانت کی ٹیکنالوجی ان کی گفتگو کا مرکز ہوگی۔

ایردوان اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی کے 78ویں اجلاس میں شرکت کے لیے اس وقت امریکا میں ہیں۔

ٹیسلا نے اگست میں بھارت میں ایک ایسی فیکٹری بنانے میں دلچسپی ظاہر کی جو کم لاگت والی الیکٹرک گاڑی (ای وی) تیار کرے۔ ٹیسلا کے اس وقت چھ کارخانے ہیں اور وہ میکسیکو میں شمالی نیو لیون ریاست میں ساتواں کارخانہ تعمیر کر رہی ہے جو برقی کار ساز کمپنی کے عالمی سطح پر موجودگی کو بڑھانے کی کوشش کا حصہ ہے۔

مسک نے مئی میں کہا تھا کہ کار ساز کمپنی ممکنہ طور پر اس سال کے آخر تک نئی فیکٹری کے لیے جگہ کا انتخاب کر لے گی۔

اس سال اب تک ٹیسلا کے حصص میں 123 فیصد اضافہ ہوا ہے اور کار ساز کمپنی نے ہفتے کے روز کہا کہ اس نے اپنی پچاس لاکھویں کار تیار کی تھی۔

ٹیسلا اور واشنگٹن میں ترک سفارت خانے نے فوری طور پر تبصرہ کی درخواستوں کا جواب نہیں دیا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں