دی ہیگ میں سفارتحانوں کے باہر قرآن کی بے حرمتی، سعودی عرب کی شدید مذمت

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

سعودی وزارت خارجہ نے دی ہیگ میں متعدد سفارت خانوں کے سامنے ایک انتہا پسند گروپ کی جانب سے قرآن پاک کے نسخوں کو شہید کی شدید مذمت کی ہے۔

کثیر الاشاعت اخبار ’’الشرق الاوسط‘ کے مطابق وزارت نے بیان میں سعودی عرب کی جانب سے اس طرح کے بار بار کیے جانے والے نفرت انگیز اقدامات کو مکمل طور پر مسترد کیے جانے کے موقف کا اعادہ کیا اور کہا اسے کسی بھی صورت قبول نہیں کیا جاسکتا۔

بیان میں کہا گیا کہ’ اس طرح کے اقدامات واضح طور پر نفرت اور نسل پرستی کو ہوا دیتے ہیں۔ رواداری، اعتدال پسندی کی اقدار کو فروغ دینے اور انتہا پسندی کو مسترد کرنے کی بین الاقوامی کوششوں سے براہ راست متصادم ہیں‘۔

وزارت نے مزید کہا ’ایسے اقدامات افراد اور ممالک کے درمیان تعلقات کے لیے ضروری باہمی احترام کو بھی سبوتاژ کرتے ہیں۔

یاد رہے کہ ڈنمارک، سویڈن اور ہالینڈ میں حالیہ مہینوں کے دوران عوامی سطح پر مظاہروں کا سلسلہ جاری ہے۔ قرآن پاک کی بے حرمتی پر مسلم ملکوں میں غم وغصے کی لہر دوڑ گئی ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں