سرحد پر اضافی بٹالین لاکر اسرائیلی فوج نے غزہ پر حملہ کردیا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

اسرائیلی فوج کے ترجمان ’’ایوچائی ادرئے‘‘ نے اعلان کیا کہ فوج نے غزہ کی پٹی پر حملے شروع کر دئیے ہیں۔ ادرئے نے ’’ ایکس‘‘ پلیٹ فارم پر بتایا کہ اس حملے کے متعلق اضافی معلومات وہ بعد میں شائع کریں گے۔

اتوار کے روز اسرائیلی فوج نے اعلان کیا کہ وہ مشرقی پٹی کو الگ کرنے والی حفاظتی باڑ سے متصل مسلسل احتجاج کی روشنی میں ایک اضافی بٹالین کے ساتھ غزہ میں اپنی ڈویژن کو مضبوط کر رہی ہے۔

فوج کے ایک مختصر بیان میں کہا گیا کہ سکیورٹی صورتحال کے جائزے کی بنیاد پر غزہ ڈویژن کو ایک اضافی بٹالین کے ساتھ مزید تقویت دینے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔

اس سے قبل غزہ کی پٹی میں وزارت صحت نے اعلان کیا تھا کہ پٹی کے مشرق میں اسرائیلی فوج کی فائرنگ سے پانچ فلسطینی زخمی ہوگئے ہیں۔

دریں اثنا عینی شاہدین نے عرب ورلڈ نیوز ایجنسی کو بتایا کہ اسرائیلی فوج نے پٹی کی مشرقی سرحد پر احتجاجی مظاہروں کا اہتمام کرنے والے فلسطینیوں کو منتشر کرنے کے لیے گیس کے بم اور دھاتی گولیاں چلائی ہیں۔

ایک روز قبل غزہ کی پٹی میں وزارت صحت نے اطلاع دی تھی کہ غزہ کی پٹی کی مشرقی سرحد پر مظاہروں کے دوران اسرائیلی فوج کی فائرنگ سے چار فلسطینی زخمی ہوئے تھے۔

حماس کے ٹھکانے پر چھاپہ

اسرائیلی فوج نے ہفتہ کو کہا تھا کہ اس نے غزہ کی پٹی میں حماس کے ایک فوجی مقام پر فضائی حملہ کیا ہے۔ تقریباً 9 دن قبل غزہ کی پٹی کے نوجوانوں نے مشرقی غزہ کی پٹی میں تقسیم کی پٹی کے ساتھ ساتھ اپنے روزانہ کے احتجاج کی تجدید کی تھی۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں