ترکیہ سے ایف سولہ طیاروں کے معاہدہ کی جانچ کروں گا: سربراہ امریکی خارجہ کمیٹی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
3 منٹس read

امریکہ میں جمعرات کو سینیٹ کی خارجہ تعلقات کمیٹی کے نئے چیئرمین نے کہا ہے کہ وہ ترکیہ کے 20 بلین ڈالر کے لاک ہیڈ مارٹن ایف سولہ لڑاکا طیاروں کے سودے کی جانچ کریں گے۔ سویڈن کے نیٹو میں شامل ہونا اس کے پش رو کے دیرینہ قبضہ کو متاثر کرے گا۔

ایک روز قبل بااثر پینل کی قیادت سنبھالنے والے ڈیموکریٹک سینیٹر بین کارڈن نے نامہ نگاروں کو بتایا کہ مجھے ان میں سے بہت سے معاملات پر انتظامیہ سے بات کرنے کی ضرورت ہے کیونکہ یہ صرف ایک مسئلے سے آگے کی بات ہے اور مجھے اس کو سمجھنے کی ضرورت ہے۔

کارڈن نے کہا کہ انہوں نے بدھ کو نیٹو کے سفیر کی میٹنگ میں ترک حکام کے ساتھ سویڈن کے نیٹو میں شمولیت پر تبادلہ خیال کیا۔

انہوں نے کہا کہ ان کا دعویٰ ہے کہ یہ اگلے مہینے کے پہلے حصے میں ہو جائے گا۔ اگر یہ حقیقت میں درست ہے تو کم از کم ہمارے پاس نیٹو کا مسئلہ حل ہو گیا ہے لیکن نیٹو کے الحاق کے علاوہ اور بھی مسائل ہیں جنہیں ہمارے بات چیت کا حصہ بننے کی ضرورت ہے۔

کمیٹی کے گزشتہ چیئرمین سینیٹر باب مینینڈیز نے سویڈن کی نیٹو میں شمولیت پر ترکیہ کے اعتراضات بلکہ صدر ایردوان کے انسانی حقوق کے ریکارڈ اور پڑوسی ملک یونان کی فضائی حدود سے پروازیں کرنے پر بھی کئی مہینوں تک اس فروخت کو روک دیا تھا۔

سینیٹ کے قوانین نے مینینڈیز کو اس وقت کمیٹی کے رہنما کے عہدے سے سبکدوش ہونے پر مجبور کیا جب استغاثہ نے اعلان کیا کہ انہیں اور ان کی اہلیہ نادین مینینڈیز کو رشوت ستانی کے سنگین الزامات کا سامنا ہے۔

امریکی سینیٹ اور ہاؤس کے خارجہ امور کے پینل کے رہنما غیر ملکی ہتھیاروں کی ہر بڑی فروخت کا جائزہ لیتے ہیں۔ وہ باقاعدگی سے سوالات پوچھتے ہیں یا انسانی حقوق یا سفارتی مسائل پر تشویش کا اظہار کرتے ہیں۔

انقرہ نے مہینوں سے سویڈن کی نیٹو کی رکنیت کی توثیق کو روک رکھا ہے۔ ترکیہ نے سٹاک ہوم پر الزام لگایا ہے کہ وہ ان لوگوں کے خلاف بہت کم کام کر رہا ہے جن کو ترکیہ دہشت گرد کے طور پر دیکھتا ہے۔ خاص طور پر کالعدم کردستان ورکرز پارٹی (پی کے کے) کے کرد ارکان کے خلاف مطلوبہ کارروائی نہیں کی جارہی۔

ایردوان نے جولائی میں کہا تھا کہ وہ اکتوبر میں توثیق کو پارلیمنٹ کو بھیجیں گے جس سے کانگریس کے کچھ ارکان مایوس ہوں گے جنہوں نے کہا تھا کہ وہ سویڈن کی نیٹو کی رکنیت کو منتقل کرنے کے لیے اسے دوبارہ سیشن میں بلا سکتے تھے۔

مینینڈیز پر فرد جرم عائد نہ ہونے کے بعد ایردوان نے کہا کہ ترکیہ کو سینیٹر کی قانونی مشکلات کو لڑاکا طیاروں کی خریداری کے موقع میں تبدیل کرنا چاہیے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں