ویڈیو: موٹر سائیکل سوار پر خاتون اور بچوں کی موجودگی سر عام دنگا فساد کے الزامات

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
3 منٹس read

ایک آدمی پر الزام ہے کہ وہ مبینہ طور پر وہی موٹرسائیکل سوار ہے جسے فلاڈیلفیا کے سٹی ہال کے قریب ایک خاتون کی کار کے عقبی شیشے پر چھلانگیں مار کر اسے توڑتے ہوئے دیکھا گیا جبکہ خاتون کے دو چھوٹے بچے گاڑی کے اندر موجود تھے اور پھر اس کا سامنا کرنے کے بعد آدمی نے اس پر بندوق لہرائی۔ اس شخص پر متعدد سنگین حملوں کا الزام عائد کیا گیا ہے۔

استغاثہ نے کہا کہ 26 سالہ کوڈی ہیرون پر لاپرواہ اور خطرے میں ڈالنے والا حملہ کرنے اور اس واقعے کے سلسلے میں جرم کا آلہ رکھنے کا بھی الزام ہے۔ حکام نے کہا کہ وہ اس کیس میں اعلیٰ ضمانت کی درخواست کر رہے ہیں۔

ہیرون کے لیے تاحال کوئی اٹارنی درج نہیں تھا اور ڈسٹرکٹ اٹارنی کے دفتر نے کہا کہ یہ نہیں معلوم کہ اس کے پاس کوئی اٹارنی ہے یا نہیں۔ بدھ کو اس کے لیے ٹیلی فون کی فہرست نہیں مل سکی۔

اتوار کی رات کی ایک وائرل ویڈیو میں دکھایا گیا کہ اے ٹی وی، موٹرسائیکل اور ڈرٹ بائیک سواروں کے ایک گروپ نے 23 سالہ نکی بلک کی سیڈان گاڑٰی کو گھیر لیا۔ ہیلمٹ والے ایک موٹر سائیکل سوار کو دیکھا گیا کہ اس نے اپنی موٹر سائیکل سے اتر کر سیڈان کی پشت پر چھلانگ لگائی اور کھڑکی کا شیشہ توڑ دیا۔

وہ اپنی کمر سے ہینڈگن نکال کر خاتون کی طرف لہراتا نظر آتا ہے جب وہ گاڑی سے نکلتی ہے۔ پھر سر کی ٹکر مار کر اسے دھکا دیتا ہے جب وہ اس کا سامنا کرتی ہے۔

عبوری پولیس کمشنر جان اسٹینفورڈ نے اسے "قابلِ کراہت رویہ" قرار دیا۔ حکام نے بتایا کہ مشتبہ شخص کو عوام کی تجاویز کی مدد سے تلاش کیا گیا اور شہر کے فرینک فورڈ سیکشن میں ایک گھر سے موٹر سائیکل، کپڑے اور 9 ملی میٹر کی ہینڈگن ثبوت کے طور پر قبضے میں لے لی گئی۔

بلک نے نامہ نگاروں کو بتایا کہ وہ اُبر ایٹس کے لیے ڈیلیوری کر رہی تھیں اور ان کی 5 سالہ بیٹی اور 2 سالہ بیٹا ساتھ گاڑی میں سوار تھے۔ انہوں نے ڈبلیو پی وی آئی ٹی وی کو بتایا کہ انہیں سب سے پہلے سٹی ہال کے قریب گاڑی کی سائیڈ پر ضرب لگائی گئی اور ایک بائیک سوار سے بحث ہوئی۔

بلک نے کہا کہ وہ شکر گزار ہیں کہ اس کے بچوں کو تکلیف نہیں پہنچی۔

"وہ بخیریت ہیں۔ ایک خراش بھی نہیں آئی۔ میرے پاس ایک محافظ فرشتہ ہے۔ خدا کا شکر ہے۔"

ڈپٹی کمشنر فرینک ونورے نے قبل ازیں ایک سوشل میڈیا پوسٹ میں کہا تھا کہ راتوں رات یہ گرفتاری "عوام کی جانب سے زبردست تجاویز اور جاسوسی کی ایک شاندار کاوش" کے بعد عمل میں آئی۔

جس ضلع میں یہ واقعہ پیش آیا، وہاں کے نمائندہ کونسل مین مارک سکوئلا نے کہا کہ بائیک، اے ٹی وی اور دیگر اکثر غیر قانونی گاڑیوں میں بڑے گروپوں میں لوگوں میں ایک قسم کی "ہجومی ذہنیت" پیدا ہو سکتی ہے جہاں انہیں یقین ہوتا ہے کہ وہ جو چاہیں کر سکتے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ اس گرفتاری سے یہ پیغام ملے گا کہ اسے برداشت نہیں کیا جائے گا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں