شاہ سعود یونیورسٹی میں سماعت سے محروم افراد کے لیے سنیپ چیٹ کے نئے فیچر کا اجرا

کنگ سعود یونیورسٹی میں جاری کتاب میلے میں سنیپ چیٹ نے پہلا مشین لرننگ لینز لانچ کیا ہے

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

سنیپ چیٹ نے سعودی وزارت ثقافت کے اشتراک سے بین الاقوامی کتاب میلے کے موقع ایک رئیلٹی لینز لانچ کیا ہے۔ سنیپ چیٹ کے اس نئے فیچر کی مدد سے سماعت سے محروم افراد کو دوسروں کا نقطہ نظر سمجھنے کے لیے ان کی گفتگو تحریری صورت میں سمجھنے کا موقع مل جائے گا۔

یہ مشین لرننگ ٹیکنالوجی کیمرہ کے ذریعے اشاروں کو عربی حروف تہجی اور الفاظ میں تبدیل کر دے گی۔ بتایا گیا ہے اس مشین لرننگ ٹیکنالوجی کے ذریعے 28 انسانی گفتگو کے دوران کیے جانے والے اشاروں کو عربی زبان کے الفاظ میں ڈھالا جا سکے گا تاہم اس بارے میں کچھ نہیں کہا گیا کہ مستقبل میں یہ فیچر 28 اشاروں پر ہی محیط رہے گا یا آئندہ دنوں اس میں وسعت آ سکے گی۔

ادب، طباعت اور ترجمے سے متعلق کمیشن کے سربراہ محمد حسن الوان نے بتایا کہ اس سال کتاب میلے شرکت منفرد اور اور اختراعی نوعیت کی رہی۔ یہ کتاب میلہ اختراعی اعتبار سے بڑا اہم رہا اور اس کی سب سے اہم وجہ سماعت سے محروم افراد کے لیے خصوصی خدمات فراہم کرنے کا موقع ملا یہ ایک بڑی پیش رفت ہے۔

انہوں نے مزید کہا کہ ہم اس نئی متاثر کے ایجاد کے تجربات کے منتظر ہیں۔ کتاب میلے کے ذریعے تقافتی تبادلے اور ادبی رسائی معاشرے کے ہر طبقے کو آسانی سے فراہم ہو سکے گی جو کہ ہمارا مقصد بھی ہے۔ یہ کتاب میلہ تھری ڈی ٹیکنالوجی کے ڈسپلے کے حوالے بھی اہم رہا کہ حاضرین کو ایک انٹر ایکٹو تجربے میں حصہ لینے کی ترغیب دی گئی۔

علاوہ ازیں کتاب میلےمیں بچوں کے لیے خصوصی طور پر ایک لینز بھی متعارف کیا گیا۔ جس کے ذریعے بچوں میں کتابیں پڑھنے کے شوق کو بڑھایا جائے گا۔ جیسا کہ کتاب میلہ کا تھیم پڑھنا آپ کو بلندی پر فائز کرتا ہے( ریڈنگ اپلفٹس یو) اس کے لوگو سے واضح ہے۔

واضح رہے کہ ایک سروے کے مطابق 83 فیصد افراد اس اینٹی ریفلیکٹنگ لینز( اے آر) سے استفادہ کرنے کے خواہاں ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں