افغانستان: 6.3 شدت کے زلزلے میں کم از کم 15 افراد ہلاک

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

افغانستان کے مغربی حصے میں زلزلے کے جھٹکوں کے نتیجے میں کم از کم 15 افراد ہلاک ہو گئے ہیں۔ ریختر سکیل پر اس زلزلے کی شدت 6.3 ریکارڈ کی گئی۔

امریکی ارضیاتی سروے کے مطابق زلزلے کا مرکز ہرات شہر سے 40 کلومیٹر شمال مغرب میں 25 کلومیٹر کی گہرائی میں تھا۔ اس زلزلے کے بعد چار ضمنی جھٹکے بھی محسوس کیے گئے۔ اطلاعات کے مطابق مقامی وقت کے صبح 11 بجے آنے والے زلزلے کے بعد ہرات شہر کے لوگ رہائشی عمارتیں چھوڑ کر باہر نکل آئے۔ زلزلے کے جھٹکے قریب ایک گھنٹے تک وقفے وقفے سے محسوس کیے گئے۔

صوبہ ہرات کے پبلک ہیلتھ ڈائریکٹر محمد طالب شاہد نے خبر رساں ادارے اے ایف پی کو بتایا اس زلزلے کے نتیجے میں کم از کم 14 افراد ہلاک ہوئے ہیں جبکہ 78 دیگر زخمی ہوئے۔ ان کا مزید کہنا تھا، ''یہ وہ تعداد ہے جو مرکزی ہسپتال کی طرف سے سامنے آئی ہے مگر یہ حتمی تعداد نہیں ہے۔‘‘ ہیلتھ ڈائریکٹر کے مطابق، ''ہمارے پاس معلومات ہیں کہ لوگ ملبے تلے دبے ہوئے ہیں۔‘‘

دوسری طرف افغانستان کی ہنگامی حالات سے نمٹنے والی وزارت کے ترجمان نے کہا ہے کہ 15 ہلاکتوں کی اطلاع صرف صوبہ ہرات کے ضلع زندہ جان سے ملی ہے۔

افغانستان میں اکثر زلزلے آتے رہتے ہیں خصوصاﹰ ہندوکش کے پہاڑی سلسلے کے آس پاس۔ گزشتہ برس جون میں صوبہ پکتیکا میں 5.9 کی شدت کے زلزلے کے نتیجے میں ایک ہزار سے زائد افراد ہلاک ہوئے تھے، جبکہ ہزارہا افراد بے گھر ہوئے تھے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں