سات برس کی دوری کے بعد سوڈان کا ایران سے تعلقات بحال کرنے کا اعلان

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

سات برس سے ایران کے ساتھ سفارتی تعلقات کے انقطاع کے بعد سوڈان نے پیر کو اعلان کردیا کہ وہ ایران کے ساتھ تعلقات بحال کر رہا ہے۔ دونوں ملکوں کے وزرائے خارجہ کے درمیان ہونے والی ملاقات کے تین ماہ بعد یہ اعلان سامنے آیا ہے۔

سوڈانی وزارت خارجہ نے اپنے بیان میں کہا کہ تعلقات بحال کرنے کا فیصلہ دونوں ملکوں کے درمیان متعدد اعلیٰ سطح کے رابطوں کے بعد کیا گیا ہے۔ تعلقات کی بحالی سے دونوں ملکوں کے مشترکہ مفادات حاصل کرنے میں مدد ملے گی۔

ایران کی جانب سے اس حوالے سے ابھی تک کوئی بیان جاری نہیں کیا گیا ہے تاہم اس کے وزیر خارجہ حسین امیر عبداللہیان نے جولائی میں کہا تھا کہ باکو میں قائم مقام سوڈانی وزیر خارجہ علی الصادق کے ساتھ ان کی ملاقات کے بعد دونوں ملک تعلقات بحال کرنے کے لیے کام کر رہے ہیں۔

یاد رہے سوڈان جو اس وقت تباہ کن اندرونی جنگ سے گزر رہا ہے نے 2016 میں ایران کے ساتھ اپنے سفارتی تعلقات منقطع کر لیے تھے۔ واضح رہے سعودی عرب اور ایران نے چین کی ثالثی میں ہونے والے معاہدے کے تحت مارچ میں تعلقات بحال کرنے پر اتفاق کیا تھا۔ جس سے تہران اور دیگر عرب ملکوں کے درمیان سفارتی تعلقات کی مکمل بحالی کی توقعات بڑھ گئی تھیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں