غزہ میں ہفتے کے روز سے امداد کی ترسیل بند، امدادی ادارے کے چار 4 ملازمین ہلاک

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

اقوام متحدہ کی ریلیف اینڈ ورکس ایجنسی (اونروا) کے ایک اہلکار نے بدھ کے روز کہا ہے کہ ایجنسی ہفتے کے روز سے غزہ کی پٹی میں کوئی امداد لانے میں کامیاب نہیں ہو سکی ہے۔

ایجنسی کی میڈیا اور کمیونیکیشن کی ڈائریکٹر جولیٹ ٹوما نے اقوام متحدہ کی نیوز سروس کو انٹرویو دیتے ہوئے انکشاف کیا کہ ایجنسی نے "غزہ پر فضائی حملوں کے نتیجے میں اپنے 4 ملازمین کو کھو دیا اور اس کی کم از کم 14 تنصیبات کو نقصان پہنچا‘‘۔

انہوں نے کہا کہ غزہ میں ’اونروا‘ کے ہیڈ کوارٹر کو منگل کی صبح "آس پاس کے علاقوں میں پرتشدد فضائی حملوں کی وجہ سے نقصان پہنچا۔ اس وقت ایجنسی کے کچھ ملازمین قریبی عمارت میں پناہ لیے ہوئے تھے۔

انہوں نے مزید کہا کہ UNRWA اسکول کے بے گھر افراد کو کچھ دن پہلے براہ راست حملے کا نشانہ بنایا یگا لیکن ساتھ ہی انہوں نے تصدیق کی کہ اب تک ایجنسی کی سہولیات میں کوئی زخمی یا ہلاک نہیں ہوا ہے۔

ٹوما نے کہا کہ UNRWA اس وقت غزہ کی پٹی میں 80 سے زائد اسکولوں اور دیگر سہولیات میں ایک لاکھ ستر ہزار افراد کی میزبانی کررہا ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں