غزہ کا بد ترین محاصرہ ، مسلسل بمباری، فلسطینیوں کی نسل کشی ہے۔ ایرانی وزیرخارجہ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

ایرانی وزیر خارجہ نے اسرائیل کی طرف سے غزہ پر بمباری اور اس کے محاصرے کو مزید سخت کر دیے جانے کو فلسطینیوں کی نسل کشی کرنے کے مترادف قرار دیا ہے۔ ایران کے سرکاری ٹی وی کے مطابق وزیر خارجہ حسین امیر عبداللہیان نے اس امر کا اظہار عراق کے دورے پر روانہ ہونے سے پہلے کیا ہے۔

ان کا کہنا تھا ' آج اسرائیلی وزیر خارجہ نیتن یاہو اور صہیونیوں کی طرف سے غزہ کے شہریوں کے خلاف جنگی جرائم جاری ہیں۔ غزہ کا محاصرہ ، شہریوں کے پینے تک کا پانی بند کرکے انہیں پیاس سے مارنے کی کوشش اور خوراک کی فراہمی کے امکانات کو ہر طرف سے محاصرہ سخت کر کے ختم کر دینا یہ سب فلسطینی کی نسل کشی کے مترادف ہے۔

وزیر خارجہ ایران نے کہا ' غزہ کی پٹی پر جو بمباری کی جارہی ہے یہ صرف حماس کے خلاف صہیونی جنگ نہیں ہے بلکہ یہ تمام تر فلسطینیون کے خلاف جنگ ہے۔ یہ فلسطینیوں کی نئی نسل کا قتل عام ہے ۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں