’خاموشی شرمناک ہے‘، فلسطین کے حق میں نہ بولنے والوں پر باکسر عامر خان کا شدید ردعمل

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
3 منٹس read

پاکستانی نژاد برطانوی باکسر عامر خان نے فلسطینیوں کے حق میں نہ بولنے والے اپنے ساتھیوں اور دوستوں پر تنقید کرتے ہوئے کہا ہے کہ آپ کی خاموشی شرمناک ہے جو دوسروں کو صرف نقصان پہنچا رہی ہے۔

عامر خان نے سوشل میڈیا پلیٹ فارم ایکس پر متعدد تفصیلی پوسٹس کیں۔

انہوں نے لکھا کہ ’پورے کریئر میں میرا مقصد چیمپیئن بننا اور اپنی شہرت اور اثر و رسوخ کے ذریعے دنیا میں مثبت تبدیلی لانا تھا، میں اپنی رائے ظاہر کرنے اور اظہار خیال کرنے کے لیے کبھی نہیں گھبرایا۔‘

ان کا کہنا تھا کہ ’حال ہی میں جب یوکرین پر روس نے حملہ کیا تو میں ذاتی طور پر یوکرینی مہاجرین کی مدد کے لیے پولینڈ گیا جو جنگ کی وجہ سے بے گھر ہو گئے تھے، بہت سے لوگوں نے ان خوفناک واقعات کے بارے میں بات کی ہے، لیکن جیسا کہ دنیا دیکھ رہی ہے کہ فلسطین میں کیا ہو رہا ہے، میں نے محسوس کیا کہ میرے بہت سے ساتھی اور دوست خاموش ہیں، کیوں؟‘

انہوں نے کہا کہ یہ بات واضح ہے کہ کچھ لوگ کھل کر فلسطین کی حمایت کا اظہار کرنے سے ڈرتے ہیں۔

پاکستانی نژاد برطانوی باکسر نے کہا کہ فلسطینیوں کی زندگی اہم ہے، دنیا یاد رکھے گی کہ کس نے ان کے حق میں بات کی اور کس نے نہیں کی اور خدا یاد رکھے گا کہ کون خاموش رہا جب بے گناہ مسلمانوں کے ساتھ ظلم ہو رہا تھا۔

ایک اور پوسٹ میں انہوں نے کہا کہ ’غیر جانبدارنہ بیان دینا کافی نہیں ہے، اس کا کوئی فائدہ نہیں، قبضہ کرنے والوں کو مظلوموں سے الگ رکھیں، یہاں کی اموات کی سیاسی نوعیت کو تسلیم کریں، کیونکہ ہر نقصان سیاست سے جڑا ہے۔‘

باکسر نے لکھا کہ جو لوگ عرب اور مسلم ثقافت کے عناصر کو اپنے کریئر کو آگے بڑھانے کے لیے استعمال کرتے ہیں، آپ کی خاموشی شرمناک ہے، آپ کی خاموشی ایک ’دہشت گردی‘ ہے جو دوسروں کو نقصان پہنچا سکتی ہے۔

عامر خان نے کہا کہ بہت سی بااثر شخصیات اور رول ماڈلز کو اس معاملے میں خاموش دیکھ کر اور اپنی پوسٹس کو ڈیلیٹ کرتے ہوئے دیکھ کر مایوسی ہوتی ہے، آپ کو کس کا خوف ہے؟ پاؤنڈز یا ڈالرز کا یا دوست کھو جانے کا خوف ہے؟

ساتھ ہی عامر خان نے فلسطینیوں کی مدد کے لیے عطیات دینے کا بھی مطالبہ کیا۔

عامر خان نے کہا کہ ان کی فاؤنڈیشن (عامر خان فاؤنڈیشن) فلسطین میں متاثرہ افراد کو خوراک، امداد اور رہائش فراہم کرنے کے لیے ایک مقامی ٹیم کے ساتھ تعاون کر رہی ہے، انہوں نے اپنے مداحوں کو فاؤنڈیشن کی ویب سائٹ کے ذریعے عطیات دے کر ان اقدامات میں حصہ ڈالنے کی درخواست بھی کی۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں