غزہ کا محاصرہ اور جنگ فوری بند کی جائے: خلیج تعاون کونسل

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

حماس کی جانب سے اسرائیل پر حیران کن حملے کے بعد سے جنگ کے گیارویں روز خلیج تعاون کونسل نے دونوں فریقوں سے جنگ بندی کا مطالبہ کیا۔ خلیج تعاون کونسل نے غزہ کا محاصرہ فوری طور پر ختم کرنے کا بھی مطالبہ کیا ہے۔

کونسل کے سیکرٹری جنرل جاسم البدیوی نے منگل کی شام کہا کہ غزہ کی پٹی تک جلد از جلد انسانی امداد پہنچانی چاہیے۔

ہم تمام فریقوں سے شہریوں کی حفاظت اور قیدیوں کو رہا کرنے کا مطالبہ کرتے ہیں۔ جاسم نے مزید کہا کہ عالمی برادری کو غزہ کی صورتحال کے حوالے سے دو رُخی نہیں دکھانی چاہیے۔

البدیوی نے اردن اور مصر کے تعاون سے امن کی بحالی کے لیے سعودی اقدام کے لیے خلیج تعاون کونسل کی حمایت پر زور دیا۔ انہوں نے کہا کہ ہم امن کی بحالی کے لیے سعودی عرب، یورپی یونین اور عرب لیگ کے اقدام کی حمایت کرتے ہیں۔ جاسم البدیوی نے کہا کہ کونسل نے فلسطینی عوام کے لیے فوری امدادی کارروائی شروع کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔ ہم نے غزہ کے لوگوں کو ریلیف فراہم کرنے کے لیے 100 ملین ڈالر مختص کیے ہیں۔

یاد رہے لڑائی کے بعد سے اسرائیل نے غزہ کی پٹی کی ناکہ بندی مزید سخت کردی ہے۔ صہیونی ریاست نے غزہ کی جانب خوراک، پانی اور ادویات کی ترسیل بھی روک دی ہے۔ غزہ کی بجلی بھی بند کردی گئی ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں