فلسطین اسرائیل تنازع

غزہ پر پے در پے اسرائیلی حملے؛ مشرق وسطیٰ میں امریکی مفادات خطرے میں

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

امریکہ کو اس بات کا خوف محسو س ہونے لگا ہے کہ فلسطین کی مزاحمتی تحریک حماس کے ساتھ اسرائیلی جنگ مشرق وسطیٰ میں پھیل سکتی ہے۔ جس سے خطے میں امریکی مفادات کو خطرات لاحق ہو جائیں گے۔

خصوصا جب اسرائیل غزہ میں جاری جنگ کو اٹھا کر لبنانی سرحد پر لے جائے گا اور اس جنگ کو شدت دینے لگے گا۔

ادھر فلسطینی محکمہ صحت کا کہنا ہے پچھلے چوبیس گھنٹوں کے دوران 117 فلسطینیوں بچوں سمیت 266 فلسطینی شہید ہو چکے ہیں۔ جبکہ اسرائیل نے غزہ کا مکمل محاصرہ بھی پوری شدت کے ساتھ جاری رکھا ہوا ہے۔

پڑوسی ملک شام جہاں حماس کے خطے میں بڑا حامی ایران اپنی فوجی موجودگی رکھتے ہیں۔ وہاں شام میں بھی اسرائیل پچھلے اتوار کو دمشق اور حلب کے ائیر پورٹ پر بمباری کر کے ان کے رن ویز کو تباہ کر چکا ہے۔

بتایا گیا ہے کہ ان کارروائیوں مںں دو شہری بھی جاں بحق ہو چکے ہیں۔

اسی طرح اسرائیل کے شمالی بارڈر پر لبنان کی طرف ایران کے حمایت یافتہ حزب اللہ گروپ کی اسرائیلی فوج کے ساتھ جھڑپیں ہو چکی ہیں جن کا مقصد حزب اللہ کو مدد دینا ہے۔

حزب اللہ کے چار جنگجو اتوار کے روز اسرائیل کے ساتھ فائرنگ کے بڑے تبادلے کے دوران جاں بحق ہوگئے ہیں۔

لبنان کے سکیورٹی سے متعلق ذرائع کا کہنا ہے اس سے پہلے فلسطینی عسکریت پسندوں کے ساتھ 11 جنگجو ہلاک ہو چکے ہیں۔ جن میں چار عام شہری ہیں۔ اسرائیلی فوجی رپورٹ کے مطابق اسرائیل کے کم از کم پانچ فوجی اور ایک عام اسرائیلی ان جھڑپوں میں مارا جا چکا ہے۔

اسرائیل اور لبنان کے درمیان سرحدات کی نگرانی میں اضافہ ہو رہا ہے۔ اس بارے میں اسرائیل کا کہنا کہ اتوار کے روز 14 کمیونٹیز نے شام کے سرحدی علاقے سے دوسری جگہ منتقل ہونے کا ارادہ بنایا ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں